دہلی حکومت کے وزیر پانی کا بحران دور کرنے کے لیے ایر کنڈیشنڈ کمروں سے نکل کر موقع پر پہنچیں :سپریم کورٹ

نئی دہلی: اپنے معاملات حکومتی سطح پر طے کرنے کے بجائے ہر معاملہ پر عدالت سے رجوع کرنے پرسپریم کورٹ نے دہلی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا ہے کہآپ خود تو کچھ کرنا نہیں چاہتے بس منھ اٹھائے سپریم کورٹ پہنچ جاتے ہیں کہ وہی کوئی حکم جاری کر ے۔ آپ چاہتے ہیں کہ ہر چیز آپ کو طباق میں سجا کر پیش کر دی جائے۔ چیف جسٹس ٹی ایس ٹھاکر اور جسٹس یو یو للت پر مشتمل بنچ نے دہلی حکومت سے کہا کہ اس کے وزیر یاتو ایرنڈیشنڈ کمروں اور دفتر میں بیٹھے رہتے ہیں یا پھر سپریم کورٹ آجاتے ہیں۔بنچ نے وزیر آب کپل مشرا کو عدالت میں موجود پاکر ان سے کہا کہ آپ خود تو ایر کنڈیشنڈ کمرے میں بیٹھے رہتے ہیں اور چاہتے ہیں کہ عدالت ہی کوئی حکم جاری کر ے۔لیکن دہلی حکومت کی پیروری کر رہے سینیئر ایڈوکیٹ راجیو دھون کے پیہم اصرار پر آخر بنچ نے حکومت ہریانہ کو ہدایت کی کہ دارالخلافہ دہلی میں پانی کی سپلائی برقرار رکھنے کے لیے ضروری اقدام کرے ۔عدالت عظمیٰ نے دہلی حکومت کی درخواست پر حکومت ہریانہ سے دو روز کے اندر کارروائی رپورٹ طلب کر لی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Sc of india pulled delhi government over water crisis in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply