دہلی میں خود کشی کرنے والے کنبہ کے دونوں بچوں کو ایک دن پہلے ہی کرکٹ کھیلتے دیکھا گیا تھا

نئی دہلی:دہلی کے براڑی علاقہ میں اتوار کی صبح اس سانحہ کے حوالے سے جس میں ایک مکان میں ایک ہی کنبہ کے 11افراد کی لاشیں پائی گئی تھیں،بات کرتے ہوئے علاقہ کے ہی جتن نام کے ایک بچے نے کہا کہ ہلاک شدگان میں جو دو چھوٹے بچے ہیں انہیں اس نے ہفتہ کی رات ہی کرکٹ کھیلتے دیکھا تھا اور بھونیش انکل انہیں کھیلتا دیکھ کر خوش ہو رہے تھے۔

یہ سن کر یقین نہیں آتا کہ اب وہ زندہ نہیں ہیں۔ہلاک ونے والے دونون بچے وریندر پبلک اسکول کے 9ویں جماعت کے طالبعلم تھے۔اس خاندان کےایک پڑوسی دیویش ملک نے کہا کہ ان کے بچے جو کچھ ہوا ہے اسے سن اور دیکھ کر بدحواس سے ہیں ۔اور وہ اتنے ڈرے سہمے ہیں کہ جو کچھ ہوا ہے اس کا وہ تصور تک نہیں کر سکتے۔

واضح ہو کہ ابھی تک حتمی طور پر یہ نہیں کہا جا سکتا کہ یہ خود کشی کا معاملہ ہے یا اجتماعی قتل کی واردات ہے۔ ہلاک شدگان میں 75سالہ ضعیفہ نارائن ،جس کوگلا دبا کر ہلاک کیا گیا ہے ،گھر کی سربراہ تھی ۔

دیگر ہلاک شدگان میں سب سے بڑی بیوہ بیٹی60سالہ پرتبھا، پرتبھا کی بیٹی 30سالہ پرینکا، بوڑھی نارائن کا بڑا بیٹا 46سالہ بھو نیش، بھونیش کی بیوی 42سالہ سویتا، بھونیش کی 24سالہ بیٹی نیتو، بھو نیش کی چھوٹی بیٹی 22سالہ مینو، بھو نیش کا سب سے چھوٹا بیٹا 12سالہ دھیرو، ماں نرائن کا چھوٹا بیٹا 42سالہ للت، للت کی بیوی 38سالہ ٹینا اورللت کا ایک12سالہ بیٹا ہیں۔

وزیر اعلیٰ اروند کیجری وال، دہلی بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جے پی ) صدر اور ممبر پارلیمنٹ منوج تیواڑی جائے واردات پہنچے ۔یہ کنبہ جو راجستھان کا رہائشی ہے گذشتہ 23سال سے براڑی کے سنت گورو گوبند سنگھ ہاسپٹل کے نزدیک گلی نمبر 24میں واقع اپنے ذاتی مکان میں رہائش پذیر تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Saw them playing cricket on saturday nightsays friend in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply