سردار پٹیل کشمیرپاکستان کو دینا چاہتے تھے:سیف الدین سوز

نئی دہلی: کشمیر کے حوالے سے پاکستان کے سابق فوجی حکمراں ریٹائرڈ جنرل پرویز مشرف کے موقف کی حمایت کر کے تنازعہ کھڑا کرنے والے کانگریس رہنما سیف الدین سوز نے ایک اور متنازعہ بیان دے کر پنڈورہ باکس کھول دیا ہے۔

انہوں نے نئی دہلی کے انڈیا انٹرنیشنل سینٹر میں اپنی کتاب Kashmir Glimpses of History and the Story of Struggle کی نقاب کشائی کے موقع پر اے این آئی سے بات کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ آزاد ہندوستان کے رہنما ولبھ بھائی پٹیل تقسیم ہند کے دوران حیدرآباد کے عوض کشمیرپاکستان کو دینا چاہتے تھے۔سوز نے کہا کہ سردار پٹیل حقیقت پسند تھے اورانہوں نے اس وقت کے وزیر اعظم پاکستان لیاقت علی خان کو کشمیر دینے کی پیش کش کی تھی۔

انہوں نے لیاقت علی سے ،جو جنگ کی تیاری کر رہے تھے اور پٹیل جنگ نہیں چاہتے تھے، کہا تھا کہ حیدرآباد کی بات نہ کریں کشمیر کی بات کی جائے۔کشمیر لے لیں لیکن حیدرآباد کی بات نہ کریں۔انہوں نے اپنی تصنیف میں لکھا ہے کہ کشمیر ر مشرف کا موققف آج بھی بالکل درست نظر آتا ہے۔مشرف نے کہا تھا کہ کشمیری پاکستان کے ساتھ انضمام نہیں چاہتے،ان کی پہلی ترجیح آزادی ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ بات اس وقت بھی درست تھی اور آج بھی ہے۔میں بھی یہی کہتا ہوں لیکن جانتا ہوں کہ یہ ممکن نہیںہے۔قبل ازیں سوز نے وادی میں حالت بگاڑنے کا مورد الزام ہندوستان کوٹہرایا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Sardar patel had offered kashmir to pakistan congress saifuddin soz in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply