اکھیلیش کا وکاس رتھ روانہ ہونے کے ایک گھنٹے بعد ہی خراب، ایس یو وی میں منتقل ہوئے

لکھنؤ:ترپردیش کے وزیر اعلی اکھلیش یادو کی سماج وادی وکاس رتھ یاترا لکھنؤ سے روانہ ہونے کے ایک گھنٹے بعد ہی خراب ہو گیا ۔ جس کے بعد اکھلیش کو ایس یو وی میں منتقل ہونا پڑا۔ البتہ اکھلیش کی رتھ یاتراکے آغاز کے موقع پر موجود اکھلیش کے تمام رشتہ داروں کو موجود پاکر یادو کنبہ میں اختلافات کی قیاس آرائیوں پر انکش لگنے کے ساتھ ہی یہ اشارہ بھی ملا کہ رشتہ ناطے کے لحاظ سے کنبے میں سب کچھ ٹھیک ٹھاک ہے۔
یادو کنبہ میں کچھ وقت سے جاری اختلافات کے درمیان ریاستی اسمبلی کے 2017 کے ہونے والے انتخابی مہم کا آغاز کرنے کے لیے وزیر اعلی اکھلیش یادو کے ذریعہ آج سے شروع کی گئی اس یاترا کے تعلق سے کل شام تک یہ صورتحال تھی کہ ریاست میں حکمراں سماج وادی پارٹی (ایس پی) کے صدر ملائم سنگھ یادو اس تقریب میں شرکت کریں گے یا نہیں۔
سیاسی مبصرین کی اس طرح کے تمام قیاس آرائیوں کے برخلاف یہاں لامارٹنیر کالج کے میدان پر منعقد رتھ یاترا کے عظیم الشان آغاز کی تقریب میں مسٹر یادو نے آج باقاعدہ شرکت کی اور اپنے سب سے بڑے بیٹے اکھلیش کو پروگرام کی کامیابی کے لئے آشیرواد بھی دیا.۔
اسٹیج پر مسٹر یادو کے ایک طرف اکھلیش تھے تو دوسری طرف سماج وادی پارٹی کی اترپردیش یونٹ کے صدر شیو پال سنگھ یادو موجود تھے۔ اکھیلیش نے تعلقات میں تلخی آنے پر اپنے چچا شیوپال کو گزشتہ 23 اکتوبر کو ریاستی کابینہ سے برطرف کر دیا تھا۔ اس تقریب کے اسٹیج پر ایس پی سے نکالے گئے مسٹر یادو کے چچازاد بھائی پرو فیسر رام گوپال یادو اور ٹیم اکھلیش کے نوجوان اراکین کی غیر موجودگی بحث کا موضوع بنی رہی۔
پارٹی سربراہ کے ذریعہ ہری جھنڈی دکھا کر روانہ کئے جانے کے بعد رتھ یاترا تقریبا 60 کلومیٹر کا فاصلہ طے کرکے اپنی منزل اناؤ کے لیے روانہ ہوئی۔ رتھ پر دیگر لوگوں کے علاوہ وزیر اعلی کے ساتھ ان کی رکن پارلیمان بیوی ڈمپل یادو اور ریاست کے سابق وزیر راجندر چودھری بھی موجود تھے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Samajwadi vikas rath yatra breaks down in lucknow in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply