سیاسی پارٹیاں اب بتائیں کہ وہ کالے دھن کے خلاف ہیں یا موافقت میں: بی جے پی

نئی دہلی:بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے کالے دھن کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے پانچ سو اور 1000روپے کے نوٹ بند کئے جانےکی دیگر اہم سیاسی پارٹیوں کی طرف سے مخالفت کیے جانے پر سخت اعتراض کرتے ہوئے آج سوال کیا کہ وہ کالے دھن کی حمایت میں ہیں یا مخالفت میں۔
بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ نے یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ کانگریس، بہوجن سماج پارٹی، سماجوادی پارٹی اور عام آدمی پارٹی (اے اے پی) پانچ سو اور 1000روپے کے نوٹ بند کیے جانے سے ایک دن پہلے (7نومبر) تک کالے دھن کے مسئلے پر روز سوال اٹھاتی تھی ،لیکن اب جب کارروائی کی گئی ہے تو ہائے توبہ مچائی جا رہی ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ان پارٹیوں کو بتانا چاہیے کہ وہ دہشت گردوں، حوالہ کاروباریوں اور منشیات کے تاجروں کی حمایت میں ہیں یا ان کے خلاف ہیں۔ یہ سوال عام لوگوں کو بھی ان پارٹیوں سے پوچھنا چاہئے۔ مسٹر امت شاہ نے کہا کہ حکومت کے فیصلے کی نکتہ چینی کرنے والی پارٹیوں کا اصلی چہرہ بے نقاب ہو گیا ہے اور اب انتخابات میں کالے دھن کا استعمال نہیں کیا جا سکے گا۔
انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ حکومت نے کالے دھن کے خلاف کارروائی اتر پردیش میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کو ذہن میں رکھ کر نہیں کی بلکہ معیشت کے کھوکھلا کرنے والے جعلی نوٹوں کے کاروبار کو تباہ کرنے کے لئے یہ کارروائی کی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Rs 500 rs 1000 banned in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply