پی ٹی آئی ملازمین کی برخاستگی کو ایمپلائز یونین نے عدالت میں چیلنج کر دیا

نئی دہلی: تقریباً300ملازمین کو برخاست کرنے کے حوالے سے پریس ٹرسٹ آف انڈیا (پی ٹی آئی)کے کی منجمنٹ سے جاری بیان پر ، جس میں اس نے خبروں کی بہتر ترسیل اور پھیلاو¿ کے اصل کاروبار کو تحفظ بہم پہنچانے کے نقطہ نظر سے 297ملازمین کو ادارے سے نکالنے کے فیصلہ کو درست قرار دیاہے،شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے فیڈریشن آف پی ٹی آئی ایمپلائز یونین نے ملازمین کی برخاستگی کو غیر قانونی اور کالعدم بتایا اور کہا کہ اس نے ملازمین کی چھٹنی کو چیلنج کرتے ہوئے ہائی کورٹ میں رٹ پٹیشن دائر کر دی ہے۔

جمعرات کو فیڈریشن نے ایک بیان میں کہا تھا کہ منجمنٹ نے معاوضہ کے طور پر28لاکھ روپے سے ایک کروڑ 9لاکھ روپے تک کی ادائیگی کا اپنے بیان میں ذکر کیاہے قطعاً گمراہ کن ہے کیونکہ اس میں ملازمین کو گریچویٹی اور پراویڈنٹ فنڈ جیسے ملنے وا لے لاز می فائدے شامل ہیں۔

جبکہ مجموعی طور پر دیکھا جائے تو علیحدگی کا معاوضہ صرف10لاکھ58ہزار 925سے 28لاکھ 78ہزار800روپے ہے۔فیڈریشن نے منجمنٹ کے اس دعوے کو بھی غلط بتایا کہ اس نے منفعت بخش وی آر ایس کی پیش کش کی تھی۔جبکہ اس وی آر ایس کے تحت 62ملازمین نے درخواست دی تھی ان میں سے بھی پی ٹی آئی نے وجوہ بیان کیے بغیر مسترد کر دی تھیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Retrenchments illegal federation of pti employees union files writ petition in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply