آسا رام ریپ کیس مقدمہ کی سماعت مکمل، فیصلہ25اپریل تک کے لیے محفوظ

جودھپور: راجستھان کے شہر جودھپور کی ایس سی /ایس ٹی عدالت نے نابالغ سے ریپ کے الزام میں جیل میں بند آسا رام کے خلاف حتمی سماعت مکمل کر کے25اپریل تک کے لیے فیصلہ محفوظ کر لیا ۔
فی الحال آسا رام جودھپور کی سینٹرل جیل میںقید ہیں۔واضح ہو کہ 16سالہ لڑکی نے آسا رام پر ان کے جودھپور آشرم میں جنسی زیادتی کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔یہ معاملہ دہلی کے کملا مارکٹ کے تھانے میں درج کرایا گیا تھا۔
جس کے بعد پولس نے آسا رام کو مدھیہ پردیش کے شہر اندور سے گرفتار کر لیا تھا۔اور پھر معاملہ جودھپور عدالت منتقل کر دیا گیاتھا۔اس معاملہ میں باپو کے خلاف تعزیرات ہند کی دفعات 376,342,506اوسر پوسکو کے دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا۔
اس معاملہ میں کئی بار آسا رام کی ضمانت کی درخواست بھی خارج کی جاچکی ہے۔ علاوہ ازیں آسا رام کے خلاف ریپ کا یک مقدمہ گجرات میں بھی درج ہے۔

Title: rape case against asaram court reserves order for april 25 | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply