مسلم پرسنل لا میں حکومتی مداخلت کے خلاف کولکاتا میں مظاہرہ

کلکتہ:یکساں سول کوڈ کے نفاذ اورمسلم پرسنل لامیں مداخلت کی کوششوں کے خلاف آج ٹیپوسلطان شاہی مسجد کے زیر اہتمام کلکتہ شہر کے قلب دھرم تلہ میں امام مولانا سیدنورا لرحمن برکتی کی قیادت میں جمعہ کی نماز کے بعد مظاہرہ کیا گیا جس میں سیکڑوں کی تعداد میں مسلمانوں کے علاوہ ترنمول کانگریس کے سینئر لیڈران بھی موجود تھے۔ مولانا برکتی نے مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے پرسنل لا انسانوں کا بنایا ہوا قانون نہیں ہے۔ یہ قوانین قرآن اور حدیث سے ماخوذ ہیں۔
اس میں ذرہ برابر تحریف و تبدیلی کی کوئی گنجائش نہیں۔مولانا نے کہا کہ ہم محب وطن ہندوستانی ہیں اور ملک کے سیکولر آئین پر ہمارا یقین ہے ملک کے آئین نے ہی ہمیں مذہب پر عمل کرنے کی آزادی دی ہے۔اس لیے اگر حکومت یا پھر کوئی بھی لاکمیشن یکساں سول کوڈ کے نفاذ کی کوشش کرتی ہے تو ہم ان پر واضح کرنا چاہتے ہیں مسلمانوں اپنے مذہبی روایات اور دین کے تحفظ کیلئے کسی بھی طرح کی قربانی پیش کرنے کو تیار ہے اور ہم اس معاملے میں متحدہیں۔
انہوں نے کہا کہ ہم مسلم پرسنل بورڈ کے موقف کی تائید کرتے ہیں اور اس کی آواز پر لبیک کہتے ہوئے مسلمانان مغربی بنگال سے اپیل کرتے ہیں کہ اگلے مہینے 18,19اور20نومبر کو ہونے والے اجلاس میں اتحاد امت کا ثبوت دیں تاکہ حکومت وقت ہمارے سامنے جھکنے پر مجبور ہوجائیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Rally in kolkata against proposed uniform civil code in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply