وزیر اعلیٰ پنجاب نے برطانوی شہری کو اذیتیں پہنچانے کے الزام کو بے بنیاد بتایا

چنڈی گڑھ: ہندوستان میں پنجاب پولس کے ذریعہ ایک برطانوی شہری جگتار سنگھ جوہل کو،جسے اس ماہ کے اوائل میں پنجاب میں ٹارگٹ کلنگ میں ملوث ہونے کے الزام میں گرفتار کر کے جیل میںڈال دیا گیا ہے، اذیتیں دینےکا معاملہ برطانوی پارلیمنٹ میں اٹھائے جانے کے بعد پنجاب کے وزیر اعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ نے اس الزام کوبے بنیاد بتایا کہ جوہل عرف جگی کو جیل میں پولس اذیتیں دے رہی ہے۔
کیپٹن امریندر سنگھ کا یہ بیان یو کے حکومت کے اس اعلان کے بعد آیا ہے جس میں اس نے کہا تھا کہ اگر کسی بی برطانوی شہری کو اذیتیں دی جارہی ہیںتو حکومت نہایت سخت کارروائی کرے گی۔کیپٹن نے کہا کہ جوہل کے معاملہ میں قانون اپنا کام کر رہا ہے۔
واضح رہے کہ ایک ریڈیو انٹرویو میں برطانوی وزیر اعظم تھریسا مئے نے کہا تھا کہ جگتار سنگھ جوہل کے حوالے سے جو تشویش ظاہر کی جارہی ہے وہ اس سے باخبر ہیں۔
وزارت خارجہ کے اہلکار وںنے جگتار سے ملاقات کی ہے اور وہ متعلقہ شخص کے ساتھ کیا ہو رہا ہے دیکھنے کے بعد اس معاملے کو آگے بڑھائیں گے اور ساتھ ہی ضروری قانونی کارروائی کریں گے ۔

Title: punjab targeted killings uk talks of extreme action if johal tortured baseless charge says captain | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply