سداشیو کوکجے ہندو پریشد کے نئے صدر منتخب ، پروین توگڑیا کو زبردست جھٹکا

نئی دہلی: وشو ہندو پریشد کے لیڈر اور مسلمانوں کے خلاف زہر افشانی کرنے کا کوئی موقع ہاتھ سے نہ جانے دینے والے پروین توگڑیا کو اس وقت باہر کا راستہ دکھا دیا گیا جب سا بق جج سداشیو کوکجے ہفتہ کے روز وشو ہندو پریشد کے نئے صدرف منتخب کر لیے گئے۔
وشو ہندو پریشد کی تاریخ میں پہلی بار صدر کا تقرر نہیں بلکہ باقاعدہ الیکشن سے چنا گیا ہے۔اس الیکشن کو پروین توگڑیا کے لیے بڑا جھٹکا سمجھا جا رہا ہے۔
اس عہدے کے لیے موجودہ صدر راگھو ریڈی اور کوکجے کے درمیان سیدھا مقابلہ تھا۔ مجموعی طور پر192ووٹ ڈالے گئےجس میں سے کوکجے کو131اور پروین توگڑیا کے حامی راگھو ریڈی کو 60ملے ایک ووٹ ناجائز قرار دیا گیا۔کوکجے 2003سے2005تک ہماچل پردیش کے گورنررہ چکے ہیں۔

Title: pravin togadia loses vishwa hindu parishad vhp election as vishnu sadashiv kokje elected new chief | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply