ناگالینڈ سیاسی بحران کی زد میں،41ممبران اسمبلی وزیر اعلیٰ کے خلاف

کوہیما:ناگالینڈ کے 41 ممبران اسمبلی نے وزیر اعلیٰ ڈاکٹر شرکوزیلی لیزتسو سے یہ کہتے ہوئے استعفیٰ کا مطالبہ کیاہے کہ ان کے پاس عہدے پر برقرار رہنے کے لیے مطلوبہ اکثریت نہیں ہے۔ ممبران اسمبلی نے اتوار کو ایک اجتماعی بیان جاری کرکے الزام لگایا کہ 60 رکنی اسمبلی میں وزیر اعلی کو محض 10 ممبران اسمبلی کی حمایت حاصل ہے اور وہ ‘اقتدارسے زبردستی چمٹے ہوئے ہیں۔’ انہوں نے کہا کہ عوام کے منتخب نمائندے نہیں ہونے کے باوجودبھی ریاست کی 12 ویں اسمبلی میں اراکین اسمبلی نے انہیں وزیر اعلیٰ بنایا۔ بیان میں کہا گیا کہ اس مختصر مدت کے دوران ہی وہ اپنا رنگ دکھانے لگے اور اقربا پروری کو فروغ دے رہے ہیں۔
اقتدار کی یہ لالچ ہندوستانی جمہوریت کے تصور کے بالکل برعکس ہے۔ ممبران اسمبلی نے دعویٰ کیا کہ وزیر اعلی این پی ایف کے صدر بھی ہیں اور جس طرح سے انہوں نے این پی ایف ممبران اسمبلی، وزرا اور پارلیمانی سکریٹریوں کو معطل کیا ہے، وہ ‘آمرانہ اور غیر جمہوری’ ہے۔ بیان میں کہا گیا کہ ناگالینڈ کے لوگوں کے احترام کے لئے ہم فوری طور پر جلد از جلد ایک تسلیم شدہ حکومت کے قیام کی کوششیں کر رہے ہیں اور ہمارا واحد مقصد لوگوں کی ضروریات کو پورا کرنا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Political storm jolts nagaland ministry in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply