ہریانہ میں شادی شدہ کی اجتماعی آبروریزی اور اس کی8 ماہ کی بچی کے قتل میں اہم سراغ ملے

گورو گرام: گروگرام میں گزشتہ ہفتے ایک خاتون کی اجتماعی آبروریزی اور اس کی آٹھ مہینہ کی بچی کی موت کے معاملے میں پولیس کو کچھ اہم سراغ ملے ہیں۔ گروگرام کے پولیس کمشنر سندیپ کھیروان نے آج یہاں بتایا کہ اس واقعہ کی تحقیقات تیزی سے چل رہی ہے اور پولیس کو ملزمین کے بارے میں اہم سراغ ہاتھ لگے ہیں۔ مجرم جلد ہی قانون کے شکنجے میں ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس بارے میں میڈیا کو تمام معلومات جلد دستیاب کرائی جائیں گی۔ عورت کی آبروریزی اور اس کی ننھی بچی کے قتل کا واقعہ گذشتہ ہفتے 29 مئی کی رات کو ہوا تھا۔
عورت گھریلو جھگڑے کے بعد اپنی آٹھ مہینہ کی بچی کو ساتھ لے کر باس کلیا گاؤں سے کھانڈسا گاوں اپنے مایکے جانے کے لئے نکلی تھی۔ راستے میں وہ جس آٹو رکشہ میں سوار ہوئی اس میں پہلے سے بیٹھے دو شخص اور آٹو ڈرائیور نے بیچ راستے میں ایک سنسان جگہ پرعورت کی اجتماعی آبروریزی کی اور اس دوران اس کی بچی کو راستے پر پھینک دیا جس سے اس کی موت ہو گئی۔ ملزمین کے فرار ہونے کے بعد عورت جب اپنی بچی کو تلاش کرتے ہوئے پہنچی تب تک وہ مر چکی تھی۔ گروگرام پولیس نے اس معاملے کی تفتیش کے لئے خصوصی تفتیشی ٹیم تشکیل دی ہے اور ملزمین کا پتہ لگانے کے لئے ان کے اسکیچ بھی جاری کئے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Police arrested one in gurugram gangrape case in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply