مہاراشٹر کے ایوت محل میں جرائم کش دواؤں کے مضر اثرات سے مزید 21کسان ہلاک

ناگپور:(یو این آئی)مہاراشٹر کے ودربھ علاقہ کے ضلع ایوت محل میں جراثیم کش دواؤں کا سانس کے ساتھ جسم کے اندر داخل ہوجانے سے مزید 21کسانوں کی موت ہوگئی جس سے ودربھ علاقہ میں اب تک تک جراثیم کش دواؤں سے ہلاک ہونے والے کاشتکاروں کی تعداد بڑھ کرتقریباً 50 ہو گئیہے اور تقریباً 2000بیمار پڑ چکے ہیں۔
کپاس کی فصل پر کیڑا لگنے سے بچانے والے جراثیم کش دوائیں سانس کے ساتھ جسم کے اندرجانے کی وجہ سے کسانوں کی موت ہورہی ہے، لیکن ابھی تک کسی افسر نے جراثیم کش دواؤں سے مررہے کسانوں کی خبر نہیں لی ہے۔ ذرائع کے مطابق کئی کسان جی ایم سی ایچ اور آئی جی ایم سی ایچ و دیگر سرکاری اسپتالوں میں داخل ہیں ،لیکن کسی افسر نے کسانو ں کی مدد کیلئے کوئی قدم نہیں اٹھایا ہے۔
اگست اور ستمبر کے مہینوں میں ودربھ کے کئی علاقوں میں یہ واقعات ہوچکے ہیں۔ قومی حقوق انسانی کمیشن (این ایچ آر سی)نے کسانوں کی موت پر مرکزی زراعت اور کسان بہبود سے متعلق وزارت،حکومت مہاراشٹر کے سکریٹریوں کو نوٹس بھیج کر چار ہفتہ کے اندر معاملہ کی تفصیلی رپورٹ طلب کی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pesticides cause farmer deaths illnesses in yavatmal in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply