حکومت نے رمضان کے دوران جموں و کشمیر میں فائر بندی کا اعلان کر دیا

نئی دہلی: مرکزی حکومت نے مقدس ماہ رمضان کے احترام میں جموں و کشمیر میں مشروط فائر بندی کا اعلان کر دیا۔مرکز ی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کہا ہے کہ مرکز نے سلامتی دستوں کو حکم دے دیا کہ آئندہ30روز کے دوران خطہ میں کوئی فوجی کارروائی نہ کریں۔جموں و کشمیر کی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کو مرکز کے اس فیصلہ سے آ گاہ کر دیا گیا۔

وزیر داخلہ نے ٹوئیٹ کیا کہ تشدد اور دہشت گردی پھیلا کر اسلام کو بدنام کرنے والوں کو تنہا کردینا ضروری ہے۔ اس دوران سلامتی دستے علاقوں کی گھیرا بندی کرنے یا تلاش مہم چلانے جیسا کوئی کام نہیں کریں گے۔ہاں البتہ اگر کسی علاقہ میں انتہاپسندوں کی موجودگی کا پورا یقین اور ٹھوس اطلاع ہو تبھی وہاں انتہا پسند مخالف کارروائی کی جائے گی۔

علاوہ ازیں دہشت گردوں اور انتہاپسندوں کی جانب سے حملے کیے جانے یابے قصور عوام کی زندگیوں کو تحفظ بہم پہنچانے کے تقاضے کی صورت میں سلامتی دستوں کو جوابی کارروائی کرنے کا حق حاصل رہے گا۔

Title: part of operation all out random casos to stop during ramadan | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply