برطانوی شہریت معاملہ پر پارلیمانی اخلاقیات کمیٹی کا راہل گاندھی کو نوٹس

نئی دہلی: ممتاز بی جے پی لیڈر لال کشن آڈوانی کی زیر قیادت پارلیمانی اخلاقیاتی کمیٹی نے کانگریس نائب صدر و ممبر پارلیمنٹ راہل گاندھی کو ایک وجہ بتاو¿ نوٹس جاری کر کے ان سے کہا ہے کہ وہ ان سوالات کو جواب دیں کہ کیا انہوں نے کبھی خود کو برطانوی شہری بتایا تھا۔
پارلیمانی اخلاقیاتی کمیٹی کے رکن ارجن رام میگھوال نے اس نوٹس کے جاری کیے جانے کی اے این آئی سے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ نہایت سنگین معاملہ ہے اور کانگریس صدر کا جواب آنے کے بعد کمیٹی اس معاملہ پر آئندہ کا لائحہ عمل مرتب کرے گی۔میگھوال نے مزید کہا کہ اس ضمن میں لوک سبھا اسپیکر سمتر امہاجن کے پاس شکایت آئی تھی جسے انہوں نے پارلیمانی اخلاقیاتی کمیٹی کو ارسال کر دیا۔ جس نے اس پر کارروائی کرتے ہوئے را ہل گاندھی کو نوٹس جاری کردیا کہ وہ اس بات کی وضاحت کریںکہ انہوں نے لندن میں ایک کمپنی کا ڈائریکٹر بنتے وقت خود کو کیسے برطانوی شہری بتایا تھا۔
دوسری جانب بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی نے بھی لندن میں ایک کمپنی قائم کرنے کے لیے راہل گاندھی پر خود کو برطانوی شہری ظاہر کرنے کا الزام عائد کیا ۔ انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی کو ایک مکتوب ارسال کر کے ان سے مطالبہ کیاکہ راہل گاندھی کی ہندوستانی شہریت اور پارلیمانی رکنیت ختم کر دی جائے ۔سوامی نے الزام لگایا کہ راہل نے 13سال پہلے برطانیہ میں ایک کمپنی قائم کی تھی اور سالانہ ریٹرن بھرتے وقت خود کو برطانوی شہری بتاتے ہوئے لندن کا اپنا رائشی پتہ بھی لکھا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Parliamentary ethics committee issues show cause notice to rahul gandhi in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply