گائے کو ساتھی شہریوں کو ہلاک کرنے کے ہتھیار کے طور پر استعمال کیا جا رہا ہے: ڈی راجا

نئی دہلی: ہندوستانی کمیونسٹ پارٹی (سی پی آئی) کے ممبر پارلیمنٹ ڈی راجا نے راجیہ سبھا میں کہا کہ گائے کو منافرت کا ہتھیار اور ساتھی شہریوں کو ہلاک کرنے ے ہتھیار کے طور پر استعمال کیا جارہا ہے۔
انہوں نے حکمران جماعت بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ سبرامنیم سوامی کے پیش کردہ تحفظ گائے بل کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ مسٹرسوامی اس بل پر پھر سوچیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو اس پر اپنا موقف واضح کرنا چاہئے کہ وہ ان سے متفق ہے یا عدم اتفاق رکھتی ہے۔ دلتوں اور مسلمانوں کو سر راہ ہجومی تشدد میں پیٹ پیٹ کر ہلاک کیا جا رہا ہے۔
ایوان میں لنچنگ معاملہ پر بحث بھی ہو چکی ہے۔ اس بل سے گﺅ رکشکوں کو لائسنس مل جائے گا۔ مجھے حیرت ہے کہ مسٹر سوامی نے مہاتما گاندھی کا نام لیا ۔مسٹر سوامی بھینسوںکی بات کیوں نہیں کرتے۔اگر حکومت مسٹر سوامی کے موقف سے متفق ہے تو میں حکومت کو خبردار کرتا ہوں کہ ہم آریائی بمقابلہ غیر آریائی بحث میں الجھ جائیں گے۔
حکومت کسی کو اس بات کا پابند نہیں کر سکتی کہ اسے کیا کھانا چاہیے اور کیا نہیں۔ اگر یہ بل منظور ہو گیا تو ملک کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔میں مادر ہند کے نام پر کہتا ہوں کہ اس بل کو گرا دیا جائے۔

Title: parliament proceedings cow is being used as a weapon of killing fellow citizens says d raja in rs in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply