احساس کمتری میں مبتلا کچھ افراد پارلیمانی کارروائی نہیں چلنے دے رہے:وزیر اعظم

نئی دہلی:وزیر اعظم نریندر مودی نے پارلیمنٹ میں حزب اختلاف کی تنقیدوں کے جواب میں کانگریس اور اس کے نائب صدر راہل گاندھی کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ کچھ لوگوں کے احساس کمتری کے باعث پارلیمنٹ کی کارروائی نہیں چل پا رہی۔
انہوں نے کہا کہ ”مشکلیں اتنی پڑیں کہ آساں ہوگئیں “کے مصداق مجھے اتنی لعن طعن کی گئی اور اتنے الزامات تھوپے گئے کہ مجھے ان کے ساتھ جینے کا سلیقہ آگیا۔یہ تو تو میں میں کے سیلاب میں ہماری جوابدہی بہی جارہی ہے۔ ہمیں عوام کے تئیں جوابدہی کو یقینی بنانا ہوگا۔میرا کیا ہے بھائی میں تو نو وارد ہوں آپ لوگ تو تجربہ کار ہیں ۔ اور ساتھی ہاتھ بڑھانا کہتے آگے بڑھیں تاکہ ہم سب ملک کی ترقی کے لیے متحد ہو کر کام کرسکیں۔
مودی نے مزید کہا کہ ”ہم پر اس لیے حملے ہو رہے ہیں کیونکہ ہم نے مختصر ترین مدت میں وہ کر دکھایا جو مرکز کی غیر بی جے پی حکومتیں60سال میں بھی نہ کر سکیں۔اس پر حسد و جلن میں یا احساس کمتری میں مبتلا نہیں ہونا چاہئے۔اگر سابق حکومتیں غریبی ختم کرنے میں کامیاب ہو جاتیں تو ہمیںمنریگا جیسی اسکیمیں چلانے کی ضرور ت نہ پڑتی۔لیکن60سال میں ابھی پانچ ریاستیں ایسی ہیں جو ابھی تک منریگا کا نفاذ نہ کر سکیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Parliament not being allowed to run due to inferiority complex says pm in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply