پیرا ڈائز دستاویزات: جینت سنہا نے خود کو پاک و طاہر بتایا

نئی دہلی: پیرا ڈائز دستاویزات افشا میں نام آنے کے بعد مرکزی وزیر جینت سنہا نے صفائی دیتے ہوئے کہا ہے کہ اومی دھار نیٹ ورک کے نمائندے کے طور پرانہوں نے ڈی لائٹ کمپنی کے لیے یہ لین دین کیے تھے۔انہوں نے کہا کہ یہ وزیر بننے سے پہلے کی بات ہے اور انہوں نے اس لین دین کی مکمل معلومات کا متعلقہ محکموں کے ساتھ پہلے ہی اشتراک کر چکے ہیں۔
انہون نے کہا ذاتی مقصد کے لیے انہون نے کوئی لین دی نہیں کیا۔واضح رہے کہ پیرا ڈائز دستاویزات افشا ہونے کے بعد جن غیر ملکیوں کمپنیوں کے نام سامنے آئے ہیں ان میں جینت سنہا کا بھی نام آیا ہے ۔بی جے پی کے ایک راجیہ سبھا رکن آر کے سنہا جو کہ اس وقت پارلیمنٹ میں سب سے زیادہ دولتمند ہیں،اپنا نام آنے پر خاموشی اختیار کر رکھی ہے
۔ اس حوالے سے معلوم کرنے پر انہوں نے لکھ کر بتایا کہ وہ ایک مذہبی روایت کے مطابق 7روز کے مون برت پر ہیں۔تاہم اس امرکا علم ہوا ہے کہ آر کے سنہا نے 2014کے لوک سبھا انتخابات کے موقع پر الیکشن کمیشن میں جو حلف نامہ داخل کیا تھا اس میں انہوں نے مالٹا کمپنی میں اپنے شئیرز کا کوئی ذکر نہیں کیا تھا۔

Title: paradise papers no transactions done for personal purpose asserts jayant sinha | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply