ہریانہ کی ایک عدالت نے ہنی پریت انساں کی درخواست ضمانت خارج کر دی

پنچکولہ(ہریانہ):ہریانہ کے شہر پنچکولہ کی ایک عدالت نے ڈیرہ سچا سودا کے سربراہ با با رام رحیم سنگھ کی لے پالک بیٹی ہنی پریت انسان کی باقاعدہ ضمانت کی درخواست خارج کر دی۔ہنی پریت نے ان بنیادوں پر یہ درخواست ضمانت داخل کی تھی کہ اس کے خلاف ہریانہ پولس کو کوئی ثبوت نہیں ملا۔
ہنی پریت کی درخواست ضمانت ان کے وکیل تنویر احمدنے ، جنہوں نے آروشی دوہرے قتل کیس میں آروشی کے والدین کو بری کرایا تھا،پیش کی تھی۔
پنچ کولہ تشدد کی تفتیش کرنے کے لیے تشکیل دی گئی ہریانہ خصوصی تحقیقاتی ٹیم نے ہنی پریت کے خلاف بغاوت کے الزامات عائد کیے تھے۔ہنی پریت انسان نے، جس کا اصل نام پرینکا تنیجہ ہے،اپنی ضمانت عرضی میں ذر پیش کیا تھا کہ وہ بے خطا 245روز سے سلاخوں کے پیچھے ہے۔

Title: panchkula violence lower court rejects honeypreets bail plea | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply