مسئلہ کشمیر صرف اور صرف دو طرفہ ہے پاکستان اسے بین الاقوامی معاملہ نہ بنائے: ایم جے اکبر

نئی دہلی: ہندوستان نے پاکستان کی طرف سے 22 ممبران پارلیمنٹ کو خصوصی ایلچی بنا کر دنیا میں جموں کشمیر میں ہندوستانی سیکورٹی فورسز کی مبینہ زیادتیوں سے مطلع کرنے کیلئے بھیجنے کے فیصلے پر جوابی حملہ کرتے ہوئے کہا کہ غلط بات 22 ہزار بار بھی بولنے پر سچ نہیں ہو جاتی۔ امورخارجہ کے وزیرمملکت ایم جے اکبر نے نئی دہلی میں پاکستانی وزیر اعظم کے فیصلے پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ غلط بات کو اگر 22 لوگ 22 بار یا 22 ہزار بار دہرائیں تو بھی وہ بات سچ نہیں ہو جاتی۔
انہوں نے کہا کہ جہاں تک کشمیر مسئلے کا سوال ہے پاکستان کو اس کو بین الاقوامی ایشو نہیں بنانا چاہیے یہ ایک دو طرفہ مسئلہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان اپنے ممبران پارلیمنٹ کو مفت سیر سپاٹے پر بھیجنا چاہتا ہے تو یہ اس کا ذاتی حق ہے۔ پاکستانی میڈیا رپورٹ کے مطابق پاکستان کے وزیر اعظم نواز شریف نے ہندوستان پر جموں کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کا الزام لگاتے ہوئے دنیا کے مختلف ممالک کو وادی کی صورت حال کے بارے میں معلومات دینے کے لئے 22 ممبران پارلیمنٹ کو اپنے خصوصی ایلچی کے طور پر دنیا بھر میں بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 71 ویں اجلاس میں بھی جموں کشمیر کے مسئلے کو زورو شور سے اٹھانے کا اعلان کیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اقوام متحدہ کو کشمیری لوگوں کے خود ارادیت کے اس زیر التوا وعدے کو بھی یاد دلائےگا۔ جموں کشمیر کے معاملے پر ہندوستان اور پاکستان کے درمیان رسہ کشی انتہائی خراب سطح تک پہنچ چکی ہے۔ہندوستان نے حال ہی میں خارجہ سکریٹری سطح پر پاکستان سے دو بار باضابطہ طور پر کہا ہے کہ وہ اس غیر قانونی مقبوضہ کشمیر سے جلد سے جلد ہٹ جائے۔ ہندوستان اس کے ساتھ اب صرف اسی مسئلے پر بات کرنا چاہتا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pakistan shouldnt internationalise kashmir its a bilateral issue mj akbar in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply