مشترکہ صدارتی امیدوار کھڑا کرنے کے لیے اپوزیشن میں اتفاق

نئی دہلی: اپوزیشن پارٹیوں نے صدر جمہوریہ اور نائب صدر کے عہدوں کے لیے ناموں پر اتفاق رائے کرنے کے لیے کوئی کوشش نہ کرنے پر بی جے پی کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے انتباہ دیا کہ حکمراں اتحاد کوئی قابل قبول نام نہیں پیش کیا جاتا ہے تو وہ دونوں عہدوں کے لیے اتفاق رائے سے اپنا مشترکہ امیدوار کھڑا کریں گی اور نام کے تعین کے لئے ایک کمیٹی تشکیل دی جائے گی۔
اس کا انکشاف ترنمول کانگریس کی سربراہ ممتا بنرجی نے آج یہاں عہدہ صدارت کے الیکشن کے لئے اپوزیشن کا لائحہ عمل طے کرنے کے لئے کانگریس صدر سونیا گاندھی کے ذریعہ لنچ پر مدعو اپوزیشن جماعتوں کے رہنماؤں کی میٹنگ کے بعد کیا۔
میٹنگ میں سابق وزیر اعظم من موہن سنگھ، کانگرس صدر سونیا گاندھی ، نائب صدر راہل گاندھی، جنتا دل یو کے رہنما شرد یادو، این سی پی کے سربراہ شرد پوار، سماج وادی پارٹی کے رہنما اکھلیش یادو، بی ایس پی کی صدر مایاوتی ، راشٹریہ جنتا دل کے صدر لالو پرساد یادو ، مارکسی کمیونسٹ پار ٹی کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری، سی پی آئی کے رہنما سدھاکر ریڈی سمیت مختلف جماعتوں کے تیس سے زیادہ رہنما موجود تھے۔

Title: opposition to field candidate if no consensus over government nominee | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply