رسوئی گیس کی قیمت میں اضافہ پر حزب اختلاف کی جماعتوں کا راجیہ سبھا میں زبردست ہنگامہ

نئی دہلی:کانگریس اور دیگر اپوزیشن پارٹیوں کے اراکین نے سبسڈی والے رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت فی ماہ چار روپئے بڑھانے کے سرکاری فیصلہ کے خلاف راجیہ سبھا میں زبردست ہنگامہ کیا جس کے باعث وقفہ سوالات سے قبل ایوان کی کارروائی دو بار ملتوی کرنی پڑی۔ ایوان کی کارروائی شروع ہونے اور ضروری دستاویز پیش کئے جانے کے بعد ترنمول کانگریس کے ڈیرک او برائن نے رسوئی گیس سلنڈر کی قیمت فی ماہ چار روپئے بڑھانے کا معاملہ اٹھاتے ہوئے کہاکہ حکومت اس پر سبسڈی ختم کرنا چاہتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پوری دنیا میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی واقع ہوئی ہے لیکن یہاں اس کے برعکس ہو رہا ہے اور اس کی قیمت میں اضافہ کیا جا رہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ حکومت کے قول و فعل میں تضاد ہے۔ بعد میں اراکین کے ایوان کے وسط میں آ کر نعرے بازی کرنے پر ایوان کی کارروائی ساڑھے 11 بجے کے پہلے 10 منٹ کیلئے اور اس کے بعد 11 بج کر 45 منٹ پر 12 بجے تک کیلئے ملتوی کردی گئی۔ اس سے قبل مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم) کے لیڈر سیتا رام یچوری نے کہاکہ حکومت نے پہلے لوگوں سے گیس سبسڈی چھوڑنے کی اپیل کی تھی اور اسی کے مطابق تین کروڑ لوگوں نے سبسڈی چھوڑ بھی دی جس کا فائدہ غریبوں کو دیا گیا۔ اب حکومت گیس سلنڈر کی قیمت فی ماہ چار روپئے بڑھا کر اس کا بوجھ غریبوں پر ڈالنا چاہتی ہے۔ انہوں نے اس کی سخت مذمت کی۔
کانگریس کے پرمود تیواری نے کہاکہ ایوان کی میٹنگ چل رہی ہے اور حکومت نے ایوان کے باہر گیس سلنڈر کی قیمت میں اضافہ کا اعلان کیا ہے جو غریبوں کے ساتھ دھوکہ ہے۔ سماج وادی پارٹی کے نریش اگروال نے کہا یہ منافع کمانے والی حکومت ہے ۔ شورو غل کے دوران ہی وزیر پٹرولیم دھرمیندر پردھان نے کہا کہ مودی حکومت غریبوں کی فلاح و بہبود کے تئیں پرعزم ہے۔ اجولا اسکیم کے تحت دو کروڑ غریبوں کو گیس کنکشن دیا گیا ہے۔ یہ کنکشن اترپردیش، بہار، چھتیس گڑھ، اڑیسہ اور بہت سی دوسرے ریاستوں میں دیئے گئے ہیں ۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Opposition raise uproar in rs over hike in price of subsidised lpg in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply