بی جے پی کو ٹکر دینے کی ہمت صرف کانگریس کے پاس :شرد پوار

ممبئی:21فروری کوپونے کے بی ایم سی گراؤنڈ میں نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کے چیف شرد پوار اورمہاراشٹر نو نرمان سیناکے سربراہ راج ٹھاکرے11سال بعد ایک ہی اسٹیج پر آمنے سامنے دیکھے۔
اس دوران ایم این ایس چیف راج ٹھاکرے صحافی کے کردار میں نظر آئے ۔راج ٹھاکرے کے سوالوں کا جواب دیتے ہوئے شرد پوار نے ملک کی موجودہ سیاسی صورت حال پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم کو اپنے عہدے کے تقاضوں کو پاس رکھ کر بیانات دینے چاہئیں۔شرد پوار نے وزیر اعظم کی طرف سے نہرو-گاندھی خاندان پر دئیے گئے بیان پر سخت اعتراض ظاہر کیا۔
انہوں نے کہا کہ ”یہ کہنا سراسر غلط ہے کہ نہرو نے ملک کی تعمیر میں کوئی کردار ادا نہیں کیا۔“انہوں نے کہا کہ ”میں نے نہرو اور گاندھی کے نظریہ کو کبھی نہیں چھوڑا، ہاں میں نے پارٹی ضرور چھوڑی ہے۔“
انہوں نے اٹل بہاری واجپئی کو یاد کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایسے شخص تھے جو سبھی کا احترام کرتے تھے۔ حالانکہ یہ کہتے ہوئے انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی کا نام نہیں لیا ، لیکن جب ٹھاکرے نے صاف الفاظ میں وزیر اعظم کا نام لیا تو پوار اس بات پر مسکرا دئیے۔راج ٹھاکرے نے جب شرد پوار سے پوچھا کہ وزیر اعظم مودی بیرونی ممالک کے رہنماؤں کو ملک کے دیگر شہروں میں نہ لے جاکر صرف احمد آباد لے جاتے ہیں، تو انہوں نے کہا ”وزیر اعظم مودی نے صرف گجرات کی ترقی کی ہے۔
اگر کوئی مہمان بیرون ملک سے آتا ہے تو دو چیزیں ضرور ہوتی ہیں۔ پہلی وزیر اعظم کا گلے لگنا اور دوسری گجرات کا دورہ کرانا۔“انہوں نے کہا کہ حکومت کے وزراءاپنے فیصلے نہیں لے پاتے ہیں انہیں وزیر اعظم کی ہاں یا نہکا انتظار کرنا پڑتا ہے۔انہوں نے کہا کہ کانگریس برے دور سے گزر رہی ہے لیکن یہ بھی سچ ہے کہ بی جے پی کو ٹکر دینے کی ہمت اس ملک میں کانگریس ہی کے پاس ہے۔ راہل گاندھی کے ہاتھوں میں کمان دینا ایک سہی فیصلہ ہے اور وہ سخت مشقت بھی کر رہے ہیں۔

Title: only congress can challenge bjpsays pawar in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply