فضائی آلودگی سے ملک کے کسی حصے میں کوئی موت نہیں ہوئی: جاوڈیکر

نئی دہلی:حکومت نے آج راجیہ سبھا میں کہا کہ فضائی آلودگی سے ملک میں کسی بھی شخص کی موت کی تصدیق نہیں ہوئی ہے اور راجدھانی دہلی میں صوتی اور فضائی آلودگی کوکم کرنے کے لئے کئے جانے والے اقدامات سے گذشتہ چند برسوں میں اوسط صوتی آلودگی کی سطح میں استحکام آیا ہے اور دہلی میں مقررہ پیمانوں کی خلاف ورزی کرکے پالیوشن کنٹرول سرٹیفیکٹ جاری کرنے والوں کے خلاف کارروائی کرنے کے احکامات دئے گئے ہیں۔ جنگلات، ماحولیا ت اور ماحولیاتی تبدیلی کے وزیر کی طرف سے انسانی وسائل کے فروغ کے وزیر پرکاش جاوڈیکر نے کہا کہ دارالحکومت دہلی میں صوتی آلودگی کی سطح کو ماپنے کا کام نہیں ہوتا ہے لیکن صوتی آلودگی کو کنٹرول کرنے کے لئے کئے جانے والے اقدامات سے گذشتہ کچھ برسوں کے دوران اوسط آلودگی سطح میں استحکام آیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ فضائی آلودگی سے ملک میں کسی شخص کی موت کا معاملہ سامنے نہیں آیا ہے۔ بیرونی ملکوں میں اسطرح کے معاملات کا مطالعہ کیا جاتا ہے اور اب ملک میں بھی اس طرح کے مطالعہ کا کام شروع کردیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہلی سے ہوکر دیگر صوبوں میں جانے والی بھاری گاڑیوں کا داخلہ کنٹرول کرنے کے ساتھ دہلی کے باہر رنگ روڈ بنانے کا کام جاری ہے۔ ایک حصے کا کام پورا بھی ہوچکا ہے اور اسے بھاری گاڑیوں کے لئے کھول دیا گیا ہے۔ دوسرے حصے پر بھی کام جاری ہے اور اگلے دو سال میں یہ کام بھی پورا ہوجائے گا اس وقت دہلی سے ہوکر دیگر ریاستوں میں جا نے والی بھاری گاڑیوں کا داخلہ پوری طرح بند ہوجائے گا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Noise pollution particulate matters exceed limit in delhi in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply