سابق وزرائے اعلی اب تاحیات سرکاری بنگلوں پر قابض نہیں رہ سکتے: سپریم کورٹ

نئی دہلی:سپریم کورٹ نے آج رولنگ دی کہ ریاستوں کے سابق وزرائے اعلیٰ زندگی بھرسرکاری بنگلوں میں رہائش پذیر ہونے کے مجاز نہیں ہیں۔ عدالت عظمیٰ نے یہ حکم اترپردیش کی ایک غیر سرکاری تنظیم لوک پرہری کی طرف سے داخل کی گئی ایک عذرداری کی سماعت کرنے کے بعد دیا۔ لوک پرہری نے سپریم کورٹ سے اترپردیش کے سابق وزرائے اعلی اور کچھ غیر مجاز تنظیموں کو سرکاری بنگلے الاٹ کئے جانے کے خلاف ہدایت جاری کرنے کے لئے فوری طور پر مداخلت کرنے کی درخواست کی تھی۔
جسٹس آر دوے کی سربراہی میں قائم سپریم کورٹ کی ایک سہ ججیبنچ نے کہا کہ اس طرح کی سرکاری رہائش گا ہوں کو دو سے تین مہینے میں خالی کر دیا جانا چاہئیں۔ جسٹس دوے ، جسٹس ادے امیش للت اور جسٹس ایل ناگیشور راؤپر مشتمل بنچ نے اپنے حکم میں کہا کہ سابق وزرائے اعلی کو تاحیات سرکاری رہائش گاہوں پر قابض رہنے کا اختیار نہیں ہے۔
سپریم کورٹ نے اترپردیش کے چھ سابق وزرااعلیٰ بشمول راج ناتھ سنگھ کو دو ماہ کے اندر سرکاری بنگلے خالی کردینے کا آج حکم دیا ہے۔بنچ نے اترپردیش حکومت کے اس نوٹفیکیشن کو منسوخ کردیا جس میں سابق وزرائے اعلی کو تاحیات سرکاری بنگلہ دینے کا التزام تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: No government accommodation for former chief ministers supreme court in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply