وزیر اعلیٰ بہار نے مظفر پور سیکس اسکینڈل کے بعد لڑکیوں کے تعلیمی اخرجات اٹھانےکے لیے اسکیم کا اعلان کیا

پٹنہ:مظفر پور شیلٹر ہوم میںبچیوں کے ریپ پر حزب اختلاف کا ہدف بنے وزیر اعلیٰ بہار نتیش کمار نے لڑکیوں کی پیدائش سے شادی تک کے تعلیمی اخراجات اٹھانے کے لیے مکھیہ منتری کنیا اٹھان یوجنا کے عنوان سے ایک اسکیم شروع کرنے کا اعلان کیا ہے جس میں وعدہ کیا گیا ہے کہ حکومت ہر اس خاندان کو جس میں زیادہ سے زیادہ دو لڑکیاں ہوں گی پیدائش سے شادی تک فی لڑکی 54100روپے مختلف مرحلوں پر قسطوں میں دے گی۔

نتیش کمار نے اس کے علاوہ بائسیکل یوجنا کے تحت دی جانے والی امداد کو2500روپے سے بڑھا کر 3000روپے کر دیا ہے۔یہ اسکیم نتیش حکومت نے2006میں اسکول جانے والی لڑکیوں کے لیے چلائی تھی جس کی اندرون و بیرون ملک بڑا مستحسن اقدام قرار دیا گیا تھا۔نتیش کمار نے مکھیہ منتری کنیا اٹھان یوجنا کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا کہ لڑکی کی پیدائش کے وقت اس کے گھر والوں کو 2000روپے دیے جائیں گے۔ اس کا آدھار کارڈ بن جانے کے بعد گھر والوں کو مزید1000روپے دیے جائیں گے۔

پیائش کے بعد دو سال کے اندر اگر اس کو تمام ٹیکے لگوا دیے گئے تو مزید 2ہزار روپے دیے جائیں گے۔اسکول میں درجہ اول میں داخلہ کے بعد600روپے وردی کے لیے دیے جائیں گے،اسی طرح درجہ سوئم سے پنجم کے درمیان 700روپے اور جب وہ ششم سے درجہ ہشتم میں جائے گی تو یہ رقم بڑھ کر1000روپے اور درجہ نہم سے دوازدہم یعنی بارھویں جماعت تک یونیفارم بنوانے کے لیے یہ رقم 1500روپے ہو جائے گی۔انٹر پاس کرنے کے بعد مزید تعلیم حاصل کرنے کے لیے10ہزار روپے دیے جائیں گے۔ گریجویشن کے بعد25000روپے دیے جائیں گے ۔اس اسکیم پر سالانہ 7221کروڑ روپے خرچ کیے جائیں گے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nitish launches scheme for girl child post muzaffapur sex scandal in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply