سوال ہندو یا مسلمان کا نہیں مشترکہ وراثت کو بچانے کا ہے: غلام نبی آزاد

نئی دہلی:کانگریس کے سینئر لیڈر غلام نبی آزاد نے آج کہا کہ ملک میں غیر اعلانیہ ایمرجنسی نافذ ہے اور ملک کا سیکولر ہندو سب سے زیادہ خطرے میں ہے۔ مسٹر آزاد نے ‘مشترکہ وراثت بچاؤ’ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیکولر ہندو سڑکوں پر جدوجہد کر رہے ہیں اور راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) ملک کو توڑنے کا کام کر رہا ہے۔ لوگ سہمے ہوئے ہیں کہ کہی آر ایس ایس کے لوگ ان گھروں کو نہ جلا دیں۔ بابائے قوم مہاتما گاندھی نے ملک کو جوڑ کر آزادی دلائی تھی جس کے تانےبانے کو ختم کیا جا رہا ہے۔
سوال ہندو یا مسلمان کا نہیں ہے سوال مشترکہ وراثت کو بچانے کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے لوگوں نے ‘ ہندوستان چھوڑو’ تحریک میں حصہ نہیں لیا تھا اور انگریزوں کی حمایت کی تھی آج یہی لوگ قوم پرست ہو گئے ہیں اور آزادی کی تحریک میں شامل ہوکر کلیدی کردار ادا کرنے والے لوگ ملک دشمن ہو گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کی بات رکھنے والے میڈیا اداروں پر انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کی تلوار لٹک رہی ہے اور اس پر طرح طرح کے دباؤ بنائے جا رہے ہیں۔ انہوں نے سوال کیا کہ یہ کیسی جمہوریت ہے؟۔انہوں نے بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ اب ان کا تعلق جے ڈی یو سے نہیں بلکہ بی جے پی یونائیٹڈ سے ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nitish belongs to bjp united not jdu ghulam nabi azad in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply