حید آباد میں داعش سے مبینہ تعلقات کے الزام میں11طلبا گرفتار،دھماکہ خیز مواد و 15لاکھ روپے برآمد

حیدرآباد:قومی تحقیقاتی ادارے (این آئی اے ) نے ایک زبردست کارروائی کرتے ہوئے تلنگانہ کے دارالحکومت حیدرآباد میں دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) کی ایک مبینہ شاخ کا قلع قمع کر دیا۔
این آئی اے نے بتایا کہ اس کے اہلکاروں نے حیدر آباد میں کارروائی کرتے ہوئے میں 11 نوجوانوں کو داعش کے ساتھ مبینہ تعلقات کے الزام میں حراست میں لے لیا۔ داعش سے تعلق رکھنے کے الزام میں حیدر آباد میں ہی 4افراد کی گرفتاری کے پانچ ماہ بعد یہ چھاپے مارے گئے ۔
ان چاروں میں سے ہی دو سے سے پوچھ گچھ کے دوران ہونے والی معلومات کی بنیاد پر یہ چھاپے مارے گئے۔ بتایاجاتاہے کہ ان چھاپوں میں گرفتار کیے جانے نوجوانوں کے قبضہ سے بھاری تعداد میں ہتھیار کے علاوہ15لاکھ روپے نقد بھی برآمد ہوئے ہیں۔ یہ مشترکہ کارروائی این آئی اے نے تلنگانہ پولیس اور سٹی کے ساتھ مل کر کی ہے۔
این آئی اے کادعوی ہے کہ یہ نوجوان شہر میں دھماکہ سمیت کئی خوفناک واردات انجام دینے کی سازش کررہے تھے۔پرانے شہر کے میر چوک ‘ بارکس ‘ چندرائن گٹہ ‘ مغل پورہ ‘ تالاب کٹہ ‘ بھوانی نگر ‘ فلک نما علاقوں کے پندرہ گھروں پر آج صبح دبش دی گئی تھی۔
بتایا جاتا ہے کہ گرفتار نوجوان بی ٹیک کے طلبہ ہیں۔ یہ بھی کہا جارہا ہے کہ فیس بک پر ان کی دوستی ہوئی تھی اور یہ تمام مبینہ طور پر اپنا گروپ بنانا چاہتے تھے۔ گرفتار نوجوانوں میں بتایا جاتا ہے کہ دہلی اوراترپردیش کے نوجوان بھی شامل ہیں۔
این آئی اے ان سب لڑکوں کو خفیہ مقام پر لے جا کر ان سے پوچھ تاچھ کررہی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ یہ تمام نوجوان حیدرآباد میں جمع ہوئے تھے۔

Title: nia busts daesh module in hyderabad11 students arrested | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply