بہار کے نائب وزیر اعلیٰ تیجسوی نے مودی حکومت کو دلت مخالف قرار دیا

پٹنہ:بہار کے نائب وزیر اعلی تیجسوی یادو نے مرکز کی نریندر مودی حکومت کو دلت مخالف قرار دیا اور کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی حکمرانی والی ریاستوں میں دلتوں پر مسلسل بڑھنے والے حملے کی ذمہ داری سے وزیر اعظم بچ نہیں سکتے۔
مسٹر یادو نے پٹنہ میں میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مرکز میں نریندر مودی کی حکومت بننے کے بعد بی جے پی حکومت والی ریاستوں میں دلتوں پر مظالم کا ایک نیااور خطرناک رجحان سامنے آیا ہے۔گﺅ رکشا کے نام پر بی جے پی حکومت والی ریاستوں میں دلتوں کو ذلیل کرنے کے ساتھ ہی ان کووحشیانہ طریقے سے زدو کوب کیا جارہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ نام نہاد تحفظ گﺅرکشک تنظیم کے کا رکنوں کو گائے کے تحفظ سے زیادہ فرقہ واریت کی بنیاد پر معاشرے کو تقسیم کرنے میں زیادہ دلچسپی رکھتے ہیں۔ نائب وزیر اعلی نے گجرات کے اونا کے واقعہ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ یہ دلتوں پر مظالم کی صرف ایک واقعہ نہیں تھا بلکہ ہریانہ، مدھیہ پردیش اور مہاراشٹر میں بھی ایسے کئی واقعات سامنے آ چکے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ بی جے پی حکومت مدھیہ پردیش میں ہی سب سے زیادہ مذبح ہیں۔ موجودہ مرکزی حکومت کے دور حکومت میں ہی بیف کی برآمدات میں اضافہ دیکھا جارہا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Narendra modi government is anti dalit says bihar deputy chief minister in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply