مظفر پور شیلٹر ہوم کیس میں شائستہ اور اشونی کو سی بی آئی تحویل میں دے دیا گیا

مظفر پور: یہاں بچیوں کے گھر کے حوالے سے کیس میں ملزمہ شائستہ پروین عرف مدھو اور ڈاکٹر اشونی کو ایک مقامی عدالت نے پانچ روز کے لیے سی بی آئی کی تحویل میں دے دیا ۔

قابل غور ہے کہ سی بی آئی نے ان دونوں کو منگل کے روز گرفتار کیا تھا۔ این جی او چلانے والی مدھو کیس کے اصل ملزم برجیش ٹھاکر کی رازدار بتائی جاتی ہے۔سی بی آئی کا کہنا ہے کہ بچیوں کو شیلٹر ہوم سے پروین کے گھر لے جایا جاتا تھا جہاں انہیں رقص اور مردوں کو رجھانا سکھایا جاتا تھا۔

لیکن اس کا دعویٰ ہے کہ وہ ملزم نہیں ہے اور نہ ہی اس کے خلاف گرفتاری کا وارنٹ جاری ہوا ہے۔پروین عرف مدھونے دوران تفتیشکہاتھا کہ چونکہ شیلٹر ہوم سے میرادور کا بھی کوئی واسطہ نہیں ہے اس لیے مجھے کوئی ڈر خوف نہیں ہے۔

اس نے یہ بھی دعوی ٰکیا کہ بچیوں کے گھر میں کیا ہوا یا کیا ہوتا تھا اس کا اسے کوئی علم نہیں ہے۔دوسری جانب ملزم ڈاکٹر اشونی کمار کو سی بی آئی نے کڈھنی علاقہ سے گرفتار کیا تھا۔ واضح ہو کہ اشونی شیلٹر ہوم کی ان لڑکیوں کو جنہیں مردوں کو پیش کرنا ہوتا تھا نشہ کا انجکشن لگانے پر مامور تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Muzaffarpur home shelter case accused sent to cbi remand in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment