شملہ میں بندروںکو موذی جانور قرار دینے پرہماچل ہائی کورٹ سے مرکزو ریاستی حکومت کو نوٹس

شملہ:ہماچل ہائی کورٹ نے شملہ میونسپل کارپوریش کی حدود میں آئندہ چھ ماہ کے لیے بندروں کو موذی جانور قرار دینے کو چیلنج کرنے والی عرضی پر مرکز اور ریاستی حکومت کو نوٹس جاری کر دیے۔عدالت نے سکریٹری ماحولیات، جنگلات اور ماحولیاتی تبدیلی ، یونین آف انڈیا،چیف سکریٹری ، حکومت ہماچل پردیش اور نیشنل بورڈ آف وائلڈ لائف کے رکن سکریٹری کو نوٹس جاری کر کے چھ ہفتہ کے ا ندر جواب دینے کی ہدایت کرتے ہوئے معاملہ کی آئندہ سماعت 3مئی مقرر کر دی۔
یہ حکم چیف جسٹس منصور احمد میر اور جسٹس ترلوک سنگھ چوہان پر مشتمل ایک ڈویژن بنچ نے راجیشور راو¿ نیگی کی اس عرضی پر دیا جس میں شملہ میونسپل کارپوریشن کی حدود میں چھ ماہ کے لیے بندروں کو موذی جانور قرار دینے کے مرکز کے فیصلہ کو چیلنج کیا گیا ہے۔نیگی نے کہا بندروں کو موذی جانور قرا دے کر حکومت نے بندروں کو ہلاک کرنے کا راستہ کھول دیا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Monkey meance himachal hc issues notice to centre state govt in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply