پٹیل اور امبیڈکر مزید کچھ سال اور بقید حیات رہتے تو ملک بہت پہلے ہی ترقی کی نئی بلندیوں پر پہنچ چکا ہوتا: وزیر اعظم مودی

نئی دہلی:وزیراعظم نریندر مودی نے کہا کہ سردار بلبھ بھائی پٹیل اور بابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر کچھ اور سال بقید حیات رہتے تو ملک ترقی کی نئی بلندیوں پر بہت پہلے پہنچ گیا ہوتا۔ مسٹر مودی نے میں دریائے نرمدا پر تعمیر ہوئے سردار سروور ڈیم کے افتتاح کے بعد یہاں منعقد ایک عظیم جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دور اندیش سردار پٹیل نے اس ڈیم کا خواب میری پیدائش سے پہلے ہی دیکھا تھا۔ میں بڑے اعتماد کے ساتھ کہنا چاہتا ہوں کہ آنجہانی پٹیل اور آنجہانی امبیڈکر جیسے دو عظیم سپوت اگر کچھ اور سال زندہ رہے ہوتے تو سردار سروور ڈیم ساٹھ یا ستر کے عشرے میں ہی مکمل ہوکر ساری مغربی ریاستوں کو سرسبز و شاداب کرچکا ہوتا۔ ملک کے معاشی نظام کو ایک طاقت مل چکی ہوتی۔ مسٹر مودی نے مزید کہا کہ ڈاکٹر امبیڈکر نے وزیر کی حیثیت سے مختصر سی مدت میں آبی انقلاب کی بے شمار اسکیمیں بنائیں ۔
اگر دونوں کچھ سال اور زندہ رہتے اور ملک کو مزید کچھ سالوں تک ان کی خدمات دستیاب رہتیں تو آج سیلاب کی وجہ سے جو تباہی ہورہی ہے یا خشک سالی سے کسانوں کی خودکشی کے جو واقعات ہورہے ہیں اس طرح کے مسائل کھڑے نہ ہوئے ہوتے۔کانگریس حکومتوں پر بالواسطہ الزام لگاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ملک کو متحدکرنے اور کشمیر کو اس میں ضم کرنے والے عظیم رہنما پٹیل کو آزادی کے بعد اس طرح پیش نہیں کیا گیا جس کے وہ مستحق تھے۔ آنے والی نسلوں کو پٹیل سے واقف کرانے کو اپنے اولین فرض کے تحت میں نے ان کے نام سے امریکہ کے اسٹیچو آف لیبرٹی سے دوگنی اونچائی کا ان کا مجسمہ ”اسٹیچو آف یونیٹی“ کا افتتاح کیا۔ مسٹر مودی نے اپنے مخصوص لہجے میں کہا کہ 182 فٹ اونچے اس عظیم مجسمے کا کام انہوں نے اس لئے شروع کیا کہ انہیں چھوٹے کام پسند نہیں آتے۔ کیونکہ انہیں چھوٹا سوچنا پسند ہے نہ چھوٹے کام کرنا ۔ ویسے بھی انہیں125کروڑ لوگوں کے ملک کے رہنما کے طور پر چھوٹے خواب دیکھنے کا حق بھی نہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Modi showcases giant dam of defiance in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply