بی جے پی قیادت والا اتحاد فرقہ پرست اور پھوٹ ڈالنے والا ہے:سونیا گاندھی

شیو ساگر/آمگوڑی: آسام میں بی جے پی قیادت والے اتحاد کو فرقہ پرست اور پھوٹ ڈالنے والی دو خطرناک طاقتوں کا ملن قرار دیتے ہوئے کانگریس صدر سونیا گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر الزام لگایا کہ وہ آسام کے لوگوں کی توہین کر رہے ہیں اور ترقی کے وعدے سے پھر رہے ہیں۔کانگریس صدر نے وزیر اعظم کو اس بات پر بھی کافی لتاڑا کہ انہوں نے خود کو ایک چائے والے کے طور پر آسام چائے سے جوڑ کر پیش کرتے ہوئے بتایا کہ وہ کیسے غریبی میں پلے بڑھے ہیں ۔
کانگریس صدر نے مزید کہا کہ جو لوگ چائے باغات میں کام کر رہے ہیںوہ اور دیگر قبائلی باشندے یہی پوچھ رہے ہیں کہ آخر اچھے دن کب آئیں گے۔واضح رہے کہ 2014کے لوک سبھا انتخابات میں ”اچھے دن آئیں گے“ مودی کا انتخابی نعرہ تھا۔آسامیوں اور شمال مشرقی عوام کی بی ے پی کے ہاتھوں بار بار توہین کیے جانے کا دعویٰ کرتے ہوئے سونیا گاندھی نے کہا کہ ریاست کی مشترکہ تہذیب و ثقافت کو خطرہ لاحق ہے اور اگر اے جی پی اور بی جے پی اتحاد بر سر اقتدار آگیا تو آسام میں جو امن و ترقی15سال کے گوگوئی دور اقتدار میں ہوئی ہے وہ خطرے میں پڑ جائے گی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Modi insulting assam bjp led alliance communaldivisivesonia in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply