میڈیکل کالج میں داخلہ گھپلے میں سی بی آئی نے اڑیسہ کے سابق جج کو گرفتار کیا

نئی دہلی: (یو این آئی) مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی ) نے بدعنوانی کے ایک معاملہ میں اڑیسہ ہائی کورٹ کے ایک سابق جج سمیت پانچ افراد کو گرفتار کیا ہے۔ سی بی آئی ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ تفتیشی ایجنسی نے سابق جج عشرت مسرور قدوسی کے علاوہ پرساد ایجوکیشنل ٹرسٹ کے مالک بی پی یادو اور پلاش یادو ، بچولیہ بشوناتھ اگروال اور حوالہ کاروباری رام دیو سارسمت کو گرفتار کیا ہے۔ ایجوکیشنل ٹرسٹ لکھنو میں پرساد انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنس کے نام سے ایک میڈیکل کالج بھی چلاتا ہے۔
ان تمام کی گرفتاری کل ملک کے آٹھ ٹھکانوں پر مارے گئے چھاپوں کے بعد دیررات میں ہوئی۔ یہ چھاپے سابق جج کی گریٹر کیلاش میں واقع رہائش گاہ کے علاوہ بھوبنیشور اور لکھنؤ کے آٹھ ٹھکانوں پر مارے گئے۔ پرساد میڈیکل کالج میں داخلہ پر روک لگا دی گئی تھی لیکن اس کو نظرانداز کرتے ہوئے نئے داخلے کئے گئے تھے۔ اس میں سابق جج کا اہم کردار بتایا جارہا ہے۔ اس سلسلہ میں سی بی آئی نے ایک معاملہ درج کیا تھا اور یہ چھاپے اور گرفتاریاں اسی سلسلہ میں ہوئی ہیں۔ سی بی آئی ذرائع نے بتایا کہ ان تمام کو آج خصوصی عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Medical admissions scam cbi arrests retired odisha high court judge in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply