گجرات فسادات میں عمر قید کی سزا پانے والی سبق وزیر مایا کوڈ نانانی و ہائی کورٹ نے بری کر دیا

نئی دہلی: گجرات کی ایک سابق وزیر اور بی جے پی لیڈر مایا کوڈ نانی کو ،جنہیں 2002کے گجرات فسادا ت کے دوران سب سے بڑی خونریزی میں پیش پیش رہنے پر 28سال کی قید کی سزا سنائی گئی تھی،جمعہ کے روز گجرات ہائی کورٹ نے بری کر دیا۔ تاہم عدالت نے آر ایس ایس سے وابستہ ایک اور بڑی سیاسی شخصیت و بجرنگ دل لیڈربابو بجرنگی کی سزاکی توثیق کر دی۔2012میں ماہر امراض نسواں مایا کوڈنانی کو احمد آباد کے ایک مضافاتی علاقہ میں واقع نرودہ پاٹیہ فسادات میں ان کے رول پر انہیں عمر قید کی سزا سنائی گئی تھی۔ واضح ہو کہ نرودہ پاٹیہ میں جسے27فروری2002کو گودھرا ٹرین آتشزنی کے بعد ریاست گیر پیمانے پر پھوٹ پرنے والے تین روزہ فسادات کے دوران ایک روز میں ہونے والی سب سے بڑی خونریزی کہا جاتا ہے، ایک ہی روزمیں 100مسلمان مارے گئے تھے۔ ایک خصوصی تحقیاتی ٹیم نے کہا تھا کہ گودھرا واقعہ کے ایک روز بعد کوڈنانی نے ہجوم کو تشدد پر اکسایا تھا اور گواہوں نے اسے موقع واردات پر دیکھا تھا۔ایک خصوصی عدالت نے کہا تھا کہ اجتماعی قتل اسی کی زیر نگرانی اور اکسانے پر کیا گیا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Maya kodnani acquitted in naroda patiya massacre case in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply