چھتیس گڑھ میں نکسلیوں نے بی ایس ایف جوانوں کو لے جارہی بس کو نشانہ بنایا ،6زخمی

رائے پور: بھارتیہ جنتا پارٹی کے صدر امیت شاہ کے اس دعوے کے باوجود کہ چھتیس گڑھ میں نکسل واد کا خاتمہ ہو گیا ہے بیجاپور میں نکسلیوں نے الیکشن ڈیو ٹی سے واپس جانے والے بی ایس ایف اہلکاروں کی بس کو نشانہ بنا کر بارودی سرنگ دھماکہ کر دیا۔

پولس کے مطابق ضلع ہیڈ کوارٹر سے چار کلومیٹر کی دوری پر مہادیو گھاٹ پر کی گئی اس واردات میں بی ایس ایف کے چار اہلکار، ایک چھتیس گڑھ پولس کا جوان اور ایک بائیک سوار عام شہری جو دھماکہ کے وقت وہیں سے گذر رہا تھازخمی ہوگئے ۔

انہیں ایک مقامی اسپتال میں داخل کر دیا گیا۔ ابتدائی رپورٹوں کے مطابق ماو¿ باغیوں نے بی ایس ایف عملہ کو لے جانے والی بس کو نشانہ بنانے سے پہلے اس پر فائرنگ کی تھی۔

واضح ہو کہ یہ حملہ چھتیس گڑھ میں ووٹروں اور الیکشن ڈیوٹی دینے والوں کو خوفزدہ کرنے کے لیے دوسرے مرحلہ کی ووٹنگ سے عین ایک ہفتہ پہلے کیا گیا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Maoists target bus with bsf personnel in chhattisgarhs bijapur six injured in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment