غلطی سے کمل کا بٹن دبانے والے بی ایس پی حامی ووٹر نے اپنی انگلی ہی کاٹ ڈالی

بلند شہر: لوک سبھا کے انتخابات کے دوسرے مرحلہ میں اترپردیش کے بلند شہر کے ایک ووٹر نے غلطی سے کمل کا بٹن دبا کر بی جے پی کو ووٹ دینے پر جھنجھلا کر اپنی شہادت کی انگلی ہی کاٹ ڈالی۔

ایک ویڈیو میں جو سوشل میڈیا پر وائرل ہے بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کے ایک حامی پون کمار نے کہا کہ جب وہ ووٹ ڈالنے بوتھ میں داخل ہوا تو الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) پر انتخابی علامات دیکھ کر کنفیوز ہو گیااور گھبراہٹ میں بی جے پی کی علاقائی حریف پارٹی بی ایس پی کو ووٹ دینے کے بجائے وزیر اعظم نریندر مودی کی پارٹی بی جے پی کے انتخابی نشان کمل پر انگلی رکھ دی۔

اپنے اس قدام پر خود پر نفریں بھیجتے ہوئے گھر پہنچا اور گوشت کاٹنے کے چھرے سے اپنی انگلی کاٹ ڈالی۔اگرچہ ووٹر اپنا ووٹ پولسن اسٹیشنوں پر الیکٹرانک مشینون کے توسط سے ڈالے جاتے ہیں لیکن ہر ووٹر کو اپنی شہادت کی انگلی پر پکی روشنائی سے ایسا نشان لگا دیا جاتا ہے کہ کھال کٹ سکتی ہے لیکن نشان نہیں مٹ سکتا۔

ایک دوسرے ویڈیو میں ایک بیت الخلاءکے باہر زمین پر کسی قصائی کا چھرا پڑا دکھایا گیا ہے جبکہ وہ شخص انگلی پر پٹی باندھے کھڑا ہے۔ اس نے کہا کہ میں ہاتھی والا بٹن دبانا چاہ رہا تھا کہ جلدی میں کمل کا بٹن دب گیا۔کمل بھارتیہ جنتا پارٹی کا اور ہاتھی بہوجن سماج پارٹی کا انتخابی نشان ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Man chops off own finger after mistakenly voting for wrong candidate in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.