ہزار اور پانچ سو کے نوٹ بند کرنے کے معاملہ پرلوک سبھا کی کارروائی پھر دن بھر کے لیے ملتوی

نئی دہلی:لوک سبھا میں نوٹوں کی منسوخی پر بحث کرانے کی مانگ کو لے کر اپوزیشن کے شور شرابہ اور آگسٹا ویسٹ لینڈ سودا گھوٹالے میں ایک طاقتور سیاسی کنبہ کے ملوث ہونے کے الزامات پر حکمراں اتحاد کے ارکان کے بحث کرانے کے مطالبے پر ہوئے زبردست شور و غل کے بعد اسپیکر سمترا مہاجن نے آج ایک بار کے التوا کے بعد ایوان کی کارروائی دن بھر کے لئے ملتوی کر دی۔
ایوان کی کارروائی دوبارہ 12 بجے شروع ہوئی تو ضروری دستاویزات ٹیبل پر رکھنے اور ضروری کام مکمل کرنے کے بعد اسپیکر نے وقفہ صفر کا اعلان کیا لیکن حزب اختلاف کے ارکان نے نوٹ بندکیے جانے کے معاملہ پر بحث کرانے کا اپنا مطالبہ دہرایا اور نعرے بازی شروع کر دی۔ اسی درمیان حکمراں اتحاد کے ارکان نے اگستا ویسٹ لینڈ کا معاملہ اٹھایا اور اس پر بحث کرانے کے سلسلے میں ہنگامہ کرنے لگے۔ہنگامے کے دوران ترنمول کانگریس کے سدیپ بندوپادھیائے نے کہا کہ سرمائی اجلاس کے آخری دو دن باقی ہیں اور نوٹ بند کرنے کے معاملہپر بحث کرائی جا سکتی ہے۔
کانگریس کے ملک ارجن کھڑگے نے کہا کہ پارٹی سرمائی اجلاس کے آغاز 16 نومبر سے ہی بحث کرانے کا مسلسل مطالبہ کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے اپوزیشن نے ضابطہ 56 کے تحت بحث کا مطالبہ کیا، وہ نہیں مانا گیا تو ضابطہ 184 کے تحت بحث کرانے کا مطالبہ کیا گیا اور وہ بھی نہیں مانا گیا۔اپوزیشن اس پر ہر حال میں بحث چاہتی ہے اس لئے اسپیکر بغیر ضابطہ کے ہی عوامی اہمیت کے اس معاملے پر بحث کرائے۔انہوں نے الزام لگایا کہ وزیر اعظم نے نوٹ بند کرنے کا فیصلہ کرکے ملک کو مصیبت میں ڈال دیا ہے اور اب وہ اس معاملے پر بحث سے بھاگ رہے ہیں۔ تلنگانہ راشٹر سمیتی کے جتندر ریڈی نے کہا کہ کل جماعتی میٹنگ میں تمام پارٹیوں نے کہا تھا کہ کالے دھن کے خلاف جو بھی قدم اٹھایا گیا ہے وہ اچھا ہے لیکن اب اس مسئلے پر پارلیمنٹ نہیں چلنے دی جا رہی ہے۔پارلیمانی امور کے وزیر اننت کمار نے کہا کہ وزیر اعظم نے کالے دھن کے خلاف اہم قدم اٹھایا ہے اور حکومت اس معاملے پر بحث کرانا چاہتی ہے۔
ان کی حکومت اس معاملے پر بحث کے لئے پہلے دن سے ہی تیار ہے لیکن اپوزیشن بحث کرانے کی بجائے نوٹ بنانے کے جگاڑ میں ہے، اس لئے بحث نہیں ہو پا رہی ہے۔انہوں نے اگستا ویسٹ لینڈ معاملے پر ترقی پسند اتحاد حکومت پر سوال اٹھائے اور اس پر بحث کرانے کی بات کی تو اپوزیشن ارکان کا ہنگامہ بڑھ گیا اور وہ نعرے لگاتے ہوئے ایوان کے وسط میں آ گئے۔ کچھ دیر تک جاری زبردست ہنگامے کے بعد محترمہ مہاجن نے ایوان کی کارروائی دن بھر کے لئے ملتوی کر دی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Lok sabha adjourned again over demonetisation issue in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply