گؤ رکشا کے نام پر مویشیوں کے کاروباریوں کی ہلاکت سے چمڑے کی صنعت تباہی کے دہانے پر:حزب اختلاف

نئی دہلی:اپوزیشن نے آج کہا کہ گﺅ رکشا کے نام پر تشدد اور قتل کے واقعات سے ملک بھرمیں چمڑے کی صنعت اور کاروبار تباہ ہو کر رہ گیا ہے۔ فٹ ویئر ڈیزائن و ڈیولپمنٹ انسٹی ٹیوٹ بل 2017 پر بحث کے دوران آج راجیہ سبھا میں اپوزیشن کے متعدد اراکین نے گؤ رکشا کے نام پر تشدد اور قتل کی وارداتوں میں اضافے کو چمڑے کی صنعت اور کاروبار تباہ ہونے کا سبب قرا ر دیا۔
راجیہ سبھا میں بحث کا آغاز کرتے ہوئے کانگریس کے پی ایل پونیا نے فٹ ویئر ڈیزائن بل کی حمایت کی اور کہا کہ چمڑے کی صنعت کا سیکٹر روزگار کا وسیع فیلڈ ہے، لیکن اس فیلڈ میں کاروبار کرنے والوں پر ہونے والے حالیہ حملوں کے واقعات سے یہ کاروبار بری طرح متاثر ہوا ہے۔ اس سلسلے میں اونا کے واقعہ کا بھی ذکر کیا۔ اس سے پہلے آج راجیہ سبھا میں وزیر تجارت و صنعت نرملا سیتارمن نے فٹ ویئر ڈیزائن و ڈیولپمنٹ بل کو پیش کیا، جس کے تحت قومی اہمیت کے فٹ ویئر ڈیزائن انسٹی ٹیوٹ قائم کرنے کی تجویز کی گئی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Leather industry destroyed because of killings in the name of gau raksha in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply