جادھو معاملہ بین الاقوامی عدالت لے جانے کا فیصلہ سخت غور و خوض کے بعد کیا گیا :ہندوستان

نئی دہلی:ہندوستان نے آج کہا کہ جاسوسی کے الزامات میں پاکستان کی فوجی عدالت کی جانب سے موت کی سزا پانے والے ہندوستانی شہری کلبھوش جادھو کی جان بچانے کے لیے بین الاقوامی عدالت کا دروازہ کھٹکھٹانے کا فیصلہ بہت غوروفکرکے بعد کیا گیا ہے۔ ویانا کے دارالحکومت ہیگ واقع بین الاقوامی عدالت میں ہندوستان نے آٹھ مئی کو ایک عرضی دائر کرکے مسٹر جادھو کے معاملے میں پاکستان پر قیدیوں کو سفارتی رابطہ سے متعلق ویانا معاہدے کی خلاف ورزی کرنے کی شکایت کرتے ہوئے اورسزائے موت پر روک لگانے کی اپیل کی تھی جس پر 9 مئی کو عدالت نے روک لگانے کا حکم جاری کیا تھا۔
بین الاقوامی عدالت نے ہندوستان کی درخواست قبول کرتے ہوئے پاکستان کی حکومت سے معاملے کا فیصلہ آنے تک سزا پر روک لگانے کو کہا ہے۔ حکومت ہند کی جانب سے ممتاز وکیل ہریش سالوے نے عدالت میں پیروی کی ہے۔ اگلی سماعت 15 مئی سے شروع ہو گی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان گوپال باگلے نے یہاں باقاعدہ بریفنگ میں کہا کہ بین الاقوامی عدالت کے ذریعے آگے بڑھنے کا فیصلہ ایک ہندوستانی شہری کی جان بچانے کے لیے بہت غور و فکر کرکے احتیاط سے لیا گیا ہے جو پاکستانی حکومت کی غیر قانونی حراست میں ہے اور ان کی زندگی خطرے میں ہے۔

Title: kulbhushan jadhav appeal in international court was carefully considered government | In Category: ہندوستان  ( india )
Tags:

Leave a Reply