کانگریس نے حکومت سازی کا دعویٰ کرنے کے لیے جنتا دل سیکولر کو غیر مشروط حمایت دے دی

بنگلور: کرناٹک اسمبلی انتخابات کے اگرچہ ابھی تک نتائج کا حتمی اعلان نہیں کیا گیا اور نہ ہی تمام222سیٹوں کے نتائج کا اعلان ہوا ہے لیکن اب تک کے جو نتائج اور رجحان سامنے آئے ہیں وہ اس امر کی نشاندہی کرتے ہیں کہ کسی بھی پارٹی کو معمولی اکثریت تک نہیں ملے گی۔

البتہ اب تک رجحان کے مطابق بھارتیہ جنتا پارٹی 105سیٹوں پر آگے چل رہی ہے جبکہ کانگرس77اور جنتا دل ایس (جے ڈی ایس) 38سیٹوں پر آگے چل رہی ہے۔ معلق اسمبلی کے امکانات بھانپتے ہی کانگریس نے ترپ کے اکے کی چال چلتے ہوئے جنتا دل ایس (جے ڈی ایس) کے سربراہ ایچ ڈی کمارا سوامی کو وزارت اعلیٰ کی کرسی کی پیش کش کر کے بی جے پی کی ایوان اقتدار میں داخل ہونے کی راہ مسدود کر دی۔

کانگریس جنرل سکریٹری غلام نبی آزاد نے، جنہیں کانگریس رہنما سونیا گاندھی نے ،جے ڈی ایس کے ساتھ سمجھوتہ کرنے کے لیے فوری طور پر بنگلور روانہ ہوجانے کے لیے کہا تھا ،جے ڈی ایس کو منا لیا اور اب کانگریس اور جے ڈی ایس نے گورنر سے ملاقات کر کے حکومت سازی کا دعویٰ کرنے کا اعلان کر دیا۔

کانگریس نے اعلان کیا ہے کہ وہ جنتا دل ایس کو غیر مشروط حمایت دینے کے اعلان کے ساتھ گورنر کو مکتوب ارسال کر رہی ہے ۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: karnataka assembly elections 2018 congress to back jds in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply