صدیوں پرانی روایت کے نام پر جلی کٹو کی اجازت نہیں دی جاسکتی: سپریم کورٹ

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے آج واضح کیا کہ جلی کٹو کو صرف اس وجہ سے مناسب نہیں ٹھہرایا جا سکتا کہ یہ پانچ ہزار سال پہلے سے ہوتا آ رہا ہے۔ جسٹس دیپک مشرا اور جسٹس روہنگٹن ایف نریمن کی بنچ نے تمل ناڈو حکومت کی اس دلیل کو غیر مناسب قرار دیا جس میں کہا گیا تھا کہ جلی کٹو صدیوں سے چلی آ رہی روایت کا حصہ ہے اس لئے اس کی اجازت دی جانی چاہئے۔
بنچ نے کہا کہ مدعی کی دلیل میں کوئی دم نہیں ہے۔ سال 1989 میں 12 سال سے کم عمر کی 10 ہزار لڑکیوں کی شادی ہوئی تھی تو کیا ہمیں اس وقت کی روایت کے نام پر آج بھی بچوں کی شادی جیسی غلط روایت کی اجازت دے دینی چاہئے۔عدالت عظمی نے کہا کہ خواہ جلی کٹو کی روایت 5000 سال پرانی کیوں نہ ہو اس کے قانون کے دائرے سے باہر ہونے کے باوجود کیا اس کی اجازت دی جانی چاہئے(یو این آئی)

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jallikattu is old doesnt mean its justified supreme court in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply