سکھ مخالف فسادات:سی بی آئی نے جگدیش ٹائٹلر سے تین گھنٹے پوچھ گچھ کی

نئی دہلی:مرکزی جانچ بیورو (سی بی آئی) نے 1984 کے سکھ مخالف فسادات کے سلسلے میں پوچھ گچھ کے لئے کانگریس لیڈر جگدیش ٹائٹلر کو سی بی آئی ہیڈ کوارٹر میں طلب کر کے تین گھنٹے تک ان سے سوال جواب کیے۔
واضح رہے کہ حال ہی میں وزارت داخلہ نے 1984 میں قومی دارالحکومت میں ہونے والے سکھ مخالف فسادات سے متعلق دیگر مقدمات کی دوبارہ تحقیقات کا خصوصی تفتیشی ٹیم (ایس آئی ٹی) کو ہدایت دی ہے۔ایس آئی ٹی نے مزید آٹھ نئے کیس قومی دارالحکومت میں درج کئے گئے ہیں۔ان میں سے کچھ معاملات میں سجن کمار اور ٹائٹلر دونوں شامل ہیں۔ حال ہی میں جانچ ایجنسی نے اس معاملے میں تحقیقات بند کر کے معاملہ داخل دفتر کر دیا تھا۔ داخل دفتر کیے جانے والی رپورٹ میں ٹائٹلر کو تمام الزامات سے بری کر دیا گیا ہے۔
تاہم، فسادات کے دوران بیوہ ہونے والیلکھویندر کور نے اسے چیلنج کردیا تھا۔ یکم نومبر 1984 کو شمالی دہلی کے گرودوارہ پل بنگش علاقے میں فسادات کے دوران لکھویندر کے شوہر کو قتل کر دیا گیا تھا۔
اس معاملے کو دہلی کی ایک عدالت میں لے جایا گیا جس نے معاملے کو بند کرنے کے سی بی آئی کے فیصلے کو مسترد کر دیا۔ عدالت نے فسادات میں ٹائٹلر کے رول کی دوبارہ تحقیقات کا حکم دیا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jagdish tytler questioned for 3 hours in 1984 riots case in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply