بیک وقت تین طلاق غیر اسلامی فعل: احمدیہ

نئی دہلی:احمدیہ مسلم جماعت انڈیا نے تین طلاق پر مسلم پرسنل لاء بورڈ کے رخ کی مذمت کرتے ہوئے آج الزام لگایا یہ غیر اسلامی رسم ہے اور مولویوں نے اسلام کی غلط تشریح کی ہے۔ تنظیم کے ایڈیشنل ایگزیکٹو ڈائریکٹر شیرا احمد نے یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ اللہ کی نگاہوں میں طلاق نہایت قبیح فعل ہے۔ قابل ذکر ہے کہ مسلم پرسنل لاء بورڈ نے کہا ہے کہ تین طلاق معاملے کو وہ دیکھے گا اور حکومت کو اس میں مداخلت نہیں کرنی چاہئے۔ مسٹر احمد نے کہا کہ اسلام میں ایک نشست میںتین طلاق بالکل جائز نہیں ہے۔ اسلامی قانون میں طلاق کا ایک طویل عمل ہے۔ قرآن کے مطابق نکاح حلالہ غیر اسلامی ہے۔
انہوں نے کہا کہ یہ تین مرحلے کا عمل ہے، صرف تین بار اعلان کرنے کا عمل نہیں ہے۔ اس عمل میں خاندان کے رکن بھی شامل رہتے ہیں اور جوڑے کو ہر ممکن موقع دیا جاتا ہے کہ وہ ایک دوسرے سے جدا نہ ہوں۔ انہوں نے سوالات کے جواب میں کہا کہ ہندوستان میں سیکولر، سماجی و اقتصادی نظام نے ہندوستانی مسلمانوں کے لئے چیزوں کو آسان بنایا ہے لیکن پاکستان میں مسلم شہریوں کے بارے میں یہ نہیں کہا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا، ”ہم ہندوستان بالخصوص شہروں میں رہنے کو اپنی خوش قسمتی سمجھتے ہیں۔ پاکستان میں تو اس کمیونٹی کو اکثر حکومت اسپانسر تشدد کا سامنا کرنا پڑتا ہے“۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: islam does not sanction triple talaq in one sitting ahmadia in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply