جج لویا کی موت کی تحقیقات کی عذر داریوں کے پس پشت کانگریس اور راہل کا ہاتھ: بی جے پی

نئی دہلی: جج لویا کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں ، جس میں عدالت عظمیٰ نے جج کی موت کو فطری بتاتے ہوئے اس پر شک ظاہر کر کے تحقیقات کرانے والی عذر داریوں کو خارج کر دیا، بی جے پی کے ترجمان سمبت پاترا نے کہا کہ ان عذر داریوں کے پس پشت نادیدہ ہاتھ کانگریس پارٹی اور اس کے صدر راہل گاندھی کا تھا جنہوں نے بی جے پی صدر امیت شاہ کی کردار کشی کی نیت سے عدلیہ کا استعمال کیا تھا۔ایک پریس کانفرنس میں پاترا نے جج لویا کی موت کے اسباب جاننے کے لیے تحقیقات کرانے کی استدعا والی پبلک انٹرسٹ لٹی گیشنز (پی آئی ایل) کو ”پولیٹیکل انٹرسٹ لٹی گیشن “ کا نام دیا اور الزام لگایا کہ مسٹر گاندھی اور ان کی پارتی اس کے پس پشت ہیں۔ مسٹر پاترا نے کہا کہ جج لویا کی موت کیتحقیقات کے مطالبہ میں کانگریس نے پریس کانفرنسیں کیں اور راہل گاندھی اپنی قیادت میں ایک اپوزیشن وفد کو صدر کے پاس لے گئے ۔ انہوں نے کہا کہ مسٹر شاہ اور ہندوستانی عدلیہ اور جمہوریت کو نشانہ بنانے کی اپنی سازش پر راہل گاندھی کو شرمندہ ہونا چاہیے اور معافی مانگنا چاہیے ۔پاترا نے کہا کہ جب سے کانگریس کی حکمراں فیملی اقتدار سے محروم ہوئی ہے سازشیں کرنے میں لگی ہے اور سیاسی مقاصد کے لیے عدلیہ کو استعمال کرنا ہندوستانی سیاست میں نئی گراوٹ ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Invisible hand behind loya death probe pleas is that of rahul bjp in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags:

Leave a Reply