پانچ اسمبلی انتخابات کے بعد ہند پاک مذاکراتی دریچہ وا ہونے کی امید

نئی دہلی:آئندہ ماہ اتر پردیش سمیت پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات مکمل ہونے کے بعد ہندوستان اور پاکستان کے درمیان بات چیت کا دروازہ پھر سے کھلنے کی توقع ہے۔ سفارتی ذرائع کے مطابق ہندوستانی سفارتی گلیاروں میں حکومت پاکستان کی طرف سے حال ہی میں کئے گئے اقدامات کو مثبت نظر سے دیکھا جا رہا ہے۔ ہندوستان بار بار کہتا رہا ہے کہ وہ پاکستان کے ساتھ تمام مسائل پر بات کرنے کو تیار ہے لیکن بات چیت دہشت گردی کے سائے میں نہیں ہو سکتی ہے۔ پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف ٹھوس قدم اٹھانا ہوگا۔
ذرائع کے مطابق لشکر طیبہ کے سرغنہ حافظ سعید کو پاکستانی قانون کے مطابق دہشت گرد درج کئے جانے ، غلطی سے کنٹرول لائن پار کرنے والے ہندوستانی فوجی چندو چوہان کو واپس بھیجنے، لال شہباز قلندر کی درگاہ پر بم دھماکہ کے بعد دہشت گردوں کے خلاف وسیع پیمانے پرکارروائی، ہندوستان میں تعینات ہائی کمشنر عبدالباسط کی جگہ تہمینہ جنجوعہ کو خارجہ سکریٹری بنانے جیسے چند فیصلوں اور پاکستان کے وزیر اعظم نواز شریف کے حالیہ بیانات کے بعد بات چیت کی کھڑکی کھلنے کے آثار پیدا ہورہے ہیں۔ ذرائع نے یہ بھی کہا کہ پاکستانی وزیر اعظم نے ہندوستان سے بات چیت کا ماحول بنانے میں معاون ثابت ہونے والے چند اقدامات کئے ہیں۔

Title: india pakistan talks may be possible after assembly elections | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply