قومی تحقیقاتی ایجنسی نے پٹھان کوٹ حملہ کیس میں جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کے خلاف فرد جرم عائد کر دی

نئی دہلی:ہندوستان کی اعلیٰ انسداد دہشت گردی ایجنسی این آئی اے نے جیش محمد اور اس کے سربراہ مسعود اظہر کے خلاف فرد جرم عائد کر دی جس میں کہا گیا ہے کہ جنوری میں پٹھان کوٹ فضائیہ کے اڈے پر دہشت گردانہ حملہ میں مسعود اور ان کی دہشت گرد تنظیم جیش محمد ملوث تھی۔این آئی اے نے فرد جرم میں یہ بھی کہا کہ دو جنوری کو جو چار بندوق بردار ایر بیس میں داخل ہوئے تھے وہ پاکستانی تھے اور اس حملہ کے پس پشت مسعود اظہرکا، جو جیش محمد کا سب سے بڑا لیڈر ہے، ذہن کارفرما تھا۔ این آئی اے کے ایک سینیئر افسر نے کہاکہ ان چاروں دہشت گردوں کو ہندوستان کے خلاف جنگ چھیڑنے کا ملزم گردانا گیا ہے ۔
یہ ہمارے سلامتی کے ڈھانچہ پر حملہ کی ایک مجرمانہ سازش تھی۔ پٹھان کوٹ ایر بیس پر حملہ کی، جس میں سارت ہندوستانی فوجی اور چار حملہ آور ہلاک ہوئے تھے،فرد جرم ایک خصوصی عدالت میں پیش کی گئی۔واضح رہے کہ پاکستانی دہشت گردوں نے یہ حملہ وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی نواسی کی شادی کی تقریب میں شرکت کے لیے ہندوستانی وزیر اعظم نریندر مودی کے اچانک لاہور آنے کے ایک ہفتہ بعد کیا گیا تھا۔جس نے دو ایٹمی حریفوں میں مذاکرات کے امکانات پھر معدوم کرد یے ۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: India indicts jaish i mohammad chief masood azhar over pathankot attack in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply