لائق رہنماؤں کے فقدان کے باعث کانگریس کی اقتدار میں واپسی مشکل، عوام کو موروثی حکمرانی پسند نہیں:وزیر مالیات

نئی دہلی:وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے کانگریس کو نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ پارٹی قیادت کے بحران سے گزر رہی ہے اور جب تک وہ اپنا لیڈر قابلیت اور صلاحیت کی بنیاد پر منتخب نہیں کرتی تب تک اس کو عوامی مینڈیٹ ملنا مشکل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج کانگریس کو ایک تو قیادت کا اور دوسرا اپنی بنیادی شکل و صورت کو بچائے رکھنے کا بحران درپیش ہے۔
انہوں نے کہاکہ آج کے ہندستانی عوامی توقعات بہت زیادہ ہیں۔ عوام اب اپنے لیڈر کو کسوٹی پر پرکھتی ہے۔ عوام کنبہ پروری کی بنیاد پر کسی کو لیڈر قبول کرنے کو تیار نہیں ہے اس لئے پارٹی جنہیں اپنا لیڈر منتخب کررہی ہے ان کا ملک کی عوامی توقعات کے ساتھ تال میل نہیں بیٹھ رہا۔ ایسے میں اگر صلاحیت اور قابلیت کی بنیاد پر ا س نے اپنی قیادت منتخب نہیں کی تو اس کے لئے آگے کی راہ بہت مشکل ہے۔ وزیر خزانہ نے کہاکہ پارٹی کے سامنے دوسرا بحران اپنی شناخت کو بچائے رکھنے کا ہے۔
ہندستان میں کئی عشروں تک بر سر اقتدار رہی کانگریس پارٹی آج ملک کے زمینی حقائق اور عوامی توقعات سے پوری طرح انجان بن چکی ہے۔ طویل عرصہ تک اقتدار میں رہنے کی وجہ سے اسے قدرتی طورپر کانگریس اور اقتدارکو لازم و ملزوم مان لیا گیا لیکن آج جو پارٹی کی حالت ہے اس میں اس کی یہ شکل کہیں نظر نہیں آتی۔ اس کی اپنی سوچ اور ایجنڈا کہیں نظر نہیں آتا وہ دوسری چھوٹی جماعتوں کی ’چیرلیڈر ‘ بن کررہ گئی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: In speech to berkeley students finance minister arun jaitley slips in an advice for congress in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply