سابرمتی ٹرین آتشزنی مقدمہ میں 11کی سزائے موت عمر قید میں تبدیل

احمد آباد: فروری 2002میں احمد آباد سے 130کلومیٹر کی دوری پر واقع گودھرا ریلوے اسٹیشن پر سابر متی ایکسپریس میں آتشزنی کے مقدمہ میں مجرم قراردیے گئے 31میں سے جن11کو سزائے موت سنائی گئی تھی ان کی سزا کو آج جسٹس اے ایس دوے اور جسٹس جی آروادھوانی پر مشتملگجرات ہائی کورٹ کی دو ججی بنچ نے عمر قید میں تبدیل کر دیا ۔
علاوہ ازیں ہائی کورٹ نے20 مجرموں کوعمر قید اور 63ملزمین کو بری کئے جانے کے ذیلی عدالت کے فیصلے کو برقرار رکھا ۔ بینچ نے ریاستی حکومت اورمحکمہ ریلوے کو مہلوکین کے اہل خانہ کو 10 لاکھ روپئے معاوضہ ادا کرنے کے احکامات دئے ہیں۔ اس مقدمہ میں 94افراد کو ، جن میں سب مسلمان تھے، قتل اور سازش کا ملزم بنایا گیا تھا۔
جن میں سے63ملزموں کو ایک ذیلی عدالت نے بری کر دیا تھا۔ان بری ہونے والوں میں مولوی عمر جی نام کا بھی وہ شخص تھا جسے ٹرین آتشزنی کے پس پشت کارفرما ذہن بتایا جاتا ہے۔
واضح رہے کہ فروری2002میں گودھرا میں سابرمتی ایکسپریس کے ایک اس کوچ میں آگ لگا دی گئی تھی جس میں ہندو یاتری اجودھیا سے کار سیوا کر کے واپس آرہے تھے۔ اس میں59کارسیوک جل کر ہلاک ہو گئے تھے۔دوسری جانب اس مقدمہ میں جتنے بھی مسلمانوں کو مجرم قرار دیا گیا وہ ٹرین میں آگ لگانے کی تردید کر تے رہے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: In godhra train blaze alleged mastermind and 62 others acquitted again in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply