امام شاہی جامع مسجد احمد بخاری نے قطر کے مطالبہ کو سازش سے تعبیر کیا

نئی دہلی:دہلی جامع مسجد کے شاہی امام مولاناسید احمد بخاری نے قطرپرحج کے معاملے میں سیاست کرنے کاالزام عائدکرتے ہوئے کہا کہ اس نے حرمین شریفین کا انتظام کسی عالمی ادارے کے ہاتھوں میں سونپنے کا مطالبہ کر کے عالم اسلام میں انتشار و اختلاف پیدا کرنے اور ایام حج یا عمرہ سیزن میں بدانتظامی کا ماحول پیدا کرنے کی مذموم کوشش کی ہے ۔ امام احمد بخاری نے کہاکہ ماضی میں خادم حرمین شریفین اوراس وقت کے فرمانروائے سعودی عرب ملک عبداللہ بن عبدالعزیز کی دعوت پرامیربحرین، امیرقطر، نائب صدرامارات،ولی عہد ابوظہبی ریاض میں جمع ہوئے اورسابقہ معاہدوں پرغورخوض کیا ۔ اور ایک ضمنی معاہدہ بھی عمل میں آیا جس میں بہت ساری شقوں کے علاوہ ایک شق یہ بھی تھی کہ معاہدہ ریاض کی کسی ایک دفعہ یا اس کے نفاذ کے طریقہ کار کی خلاف ورزی پورے معاہدے کی خلاف ورزی مانی جائے گی۔
اس کے بعد بھی مختلف معاہدے ہوئے، بات چیت ہوئی۔ مگرقطرنے کسی بھی معاہدے پر عمل نہیں کیا اورحکومت سعودی عربیہ کے خلاف اپنی سازشوں میں مصروف رہا۔ مولانابخاری نے یہاں جاری ایک پریس ریلیز میں کہاکہ قطر کی یہ خطرناک سازشیں نئی نہیں بلکہ تقریبا 20 برسوں سے یہ سلسلہ چل رہا تھا۔ حکومت سعودی عربیہ اور دیگر ممالک ایک عرصے سے صبرسے کام لے رہے تھے۔ قطر کی سازش کا خطرناک پہلو یہ ہے کہ وہ حرمین شریفین کیلئے خطرہ بن چکاہے اور وہ مکہ مکرمہ اورمدینہ منورہ پر قابض ہوناچاہتا ہے۔ دنیا کا کوئی بھی مسلمان قطعاً یہ نہیں برداشت کرے گاکہ اس پاک سرزمین کو دنیا کا کوئی ملک سیاسی اکھاڑہ بنائے۔ مولانا بخاری نے مزید کہا کہ اس حقیقت سے انکار نہیں کیاجاسکتا کہ حکومت سعودی عربیہ جس طرح حرمین شریفین، حجاج کرام اور معتمرین کی خدمات انجام دیتارہاہے اس کا اعتراف ہمیں ہی نہیں بلکہ دنیا کے مسلمانوں کو ہے۔ اوردنیا کاکوئی بھی ملک اس طرح خدمت انجام نہیں دے سکتا، جس طرح آج سعودی حکومت انجام دے رہی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Imam of jama masjid delhi denounces qatar in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply